-----

گرمی بڑھتے ہی غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ میں بھی اضافہ

Germi Bhartay Hi Gir Ilamiya Load Shedding Ka Izafa

سیف الرحمٰن
موسم کی ستم ظریقی کے ساتھ ہی ملک بھر میں غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ میں بھی اضافہ ہوگیا ہے ۔

مسلم لیگ ن کی حکومت کے چار سال مکمل ہونے کو ہیں اور موجودہ موسم گرمااس کے لیے انتہائی اہم ہے ،سوال یہ ہے کہ کیا حکومت لوڈشیڈنگ میں کمی کے وعدے پورے کر پائے گی ؟

اب تک تو مر حلہ وار لوڈ شیڈنگ میں کمی کے وعدے پورے ہوتے دکھائی نہیں دے رہے ،شہروں میں 4اور دیہی علاقوں میں 6 گھنٹے کی اعلانیہ لوڈ شیڈنگ سے بات آگے نکل چکی ہے۔

شہروں میں 8سے 10جبکہ دیہی علاقوں میں 12سے14گھنٹوں تک لوڈشیڈنگ کی اطلاعات ہیں، پارہ چڑھنے کے ساتھ ہی وزارت پانی وبجلی میں قائم وفاقی شکایت سیل میں فون پہ فون آ رہے ہیں۔

انچارج وفاقی شکایت سیلم مشتاق شاہ کے مطابق کچھ دنوں سے لوڈ بڑھ گیا ، غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ ہو رہی ہے۔

وفاقی وزیر پانی و بجلی خواجہ آصف کے مطابق صورتحال پن بجلی کی قلت کے باعث پیدا ہوئی ،مگر انہیں امید بھی ہے کہ اپریل کے آخر یا مئی کے شروع میں پانی اور دیگر ذرائع سے4 سے ساڑھے 4 ہزار میگاواٹ بجلی سسٹم میں آجائے گی اور صورتحال بہتر ہوجائے گی،جس کے بعد لود شیڈنگ شہروں میں3 سے 4 اور دیہی علاقوں میں 5 گھنٹے تک واپس آجائے گی۔

ملک میں ان دنوں بجلی کا شارٹ فال اوسطاً 4 ہزار میگاواٹ سے زیادہ ہے ، بجلی کی پیداوار ساڑھے 12 ہزار میگاواٹ جبکہ طلب ساڑھے 16 ہزار میگاواٹ سے زیادہ ہے۔

پانی سے 2800 سرکاری تھرمل پاور پلانٹس سے 2200 جبکہ نجی بجلی گھروں سے ساڑھے 7 ہزار میگاواٹ سے زیادہ بجلی حاصل کی جارہی ہے۔