Can't connect right now! retry
Advertisement

بلاگ
20 جون ، 2017

اس عید پر خواتین کے نئے فیشن

اس عید پر خواتین کے نئے فیشن

عید پر سب سے الگ لگنا ہر ایک کی ترجیح ہوتی ہے اور اگر خواتین کی بات کی جائے تو وہ کپڑوں سے جوتوں تک میچنگ کو سامنے رکھتی ہیں تاکہ اس خاص موقع پر وہ اپنی خوش لباسی سے سب کو متاثر کر سکیں۔

پاکستان میں عیدالفطر کی تیاری عموماً 15 ویں روزے کے بعد ہی شروع ہوتی ہے اور بازاروں میں سحری تک لوگوں کا جم غفیر ہوتا ہے۔

شاپنگ کا نام آئے اور خواتین کا ذکر نہ کیا جائے تو بہت زیادتی ہوگی کیونکہ شاپنگ عید کی ہو یا کسی اور موقع پر، اس کے لیے خواتین تو سب سے آگے ہوتی ہیں اور انہیں ہر وقت یہ جاننے کی کھوج رہتی ہے کہ فیشن میں آخر کیا چل رہا ہے تاکہ وہ بھی موجودہ فیشن کا حصہ بن سکیں۔

آج کل خواتین اور نوجوان لڑکیوں کے ملبوسات سمیت دیگر فیشن اور پسند کے معیار میں بھی خاصا فرق آتا جارہا ہے۔ خواتین چاہتی ہیں کہ وہ عید پر دلکش نظر آئیں اور عید کی شاپنگ بھی ٹرینڈ کے مطابق کریں جب کہ ان کی نسبت نوجوان لڑکیاں شوخ اور نت نئے اسٹائل اپنانا چاہتی ہیں تاکہ عید جیسے موقع پر وہ بھی سب کی نظروں میں رہیں۔

عید کے حوالے سے خواتین کا کہنا ہے کہ چھوٹی عید یعنی عید الفطر پر ہلکے رنگوں کے ملبوسات کا ٹرینڈ زیادہ مقبول ہے۔

جب کہ ڈیزائنرز کے مطابق موسم کی مناسبت سے بیل باٹمز اور چھوٹی قمیضیں اس وقت فیشن کا حصہ ہیں۔

عید کے لیے ملبوسات میں اونچی کرتیاں، قمیضیں اور فراک پسند کیے جا رہے ہیں، یہی وجہ ہے کہ منفرد انداز اور رنگوں میں ان کو متعارف کروایا ہے۔

عید پر خواتین سگریٹ پینٹ، ٹیولپ شلواراور فلیپر پہن سکتی ہیں جن میں وہ نہایت خوبصورت اور دلکش لگیں گی۔

لڑکیوں کے مطابق اونچی یا نارمل لمبائی کی قمیض کو سنبھالنا آسان ہوتا ہے جب کہ میکسی اور لانگ شرٹس جیسے لباس دکھنےاور پہننے میں نہایت دلکش ہیں لیکن انہیں سنبھالنے میں مشکلات پیش آتی ہیں۔

کپڑوں کی خریداری کے بعد خواتین کے لیے دوسرا بڑا مسئلہ ان کی سلائی ہوتی ہے کیونکہ انہیں کس فیشن میں سلوانا ہے اس ٹرینڈ کا بھی ایک خاص خیال رکھنا ہوتا ہے۔

شارٹ شرٹس کے ساتھ سگریٹ پینٹس اور دیگر فیشن ٹراوزرز کے اسٹائل کے ساتھ سجنے سنورنے کے لیے قمیض میں بوٹ نیک لائن بنایا جارہا ہے جو شرٹ میں خوبصورت دکھائی دیتا ہے۔ چاہے قمیض کڑاہی والی ہو یا سادھی، دونوں میں اس کا اسٹائل منفرد ہی لگتا ہے اور جوڑے میں چار چاند لگ جاتے ہیں۔

عید پر کپڑوں کے ساتھ ساتھ جیولری اور جوتے بھی خاص فیشن کا خیال کرتے ہوئے خریدے جاتے ہیں۔

اس عید پر کھسے کا ٹرینڈ ہے جن میں کھسوں پر مختلف رنگوں کے دھاگے کا کام کیا جا رہا ہے جسے ٹیولپ شلوار، فلیپر یا سگریٹ پینٹ پرروایتی انداز میں پہنا جارہا ہے۔ اسی طرز پر ڈیزائنرز نے کھوسے نما سینڈلز بھی متعارف کرائی ہیں جو بالکل سیدھے ہیں تاکہ خوتین انہیں باآسانی پہن کر چل پھر سکیں۔

ٹسلز ایئر رنگ:

عید کے لیے لباس اور جوتوں کے ساتھ جیولری بھی دیدہ زیب لی جاتی ہے اسی لیے نت نئے اسٹائلز کو مدنظر رکھتے ہوئے ٹسلز ایئر رنگز بازوں میں نظر آ رہی ہیں جس کی وجہ سے فیشن میں مزید نکھار آگیا ہے۔

ان ایئر رنگز کی نازک بناوٹ جہاں لباس کو قابل دید بناتی ہے وہیں فیشن کو بھی مکمل کرتی ہے جس سے خواتین مزید حسین اور دلکش نظر آسکتی ہیں۔ اسی خوبصورت انداز کو دیکھتے ہوئے یہ منفرد ٹرینڈز متعارف کرائے گئے ہیں۔

چوکر:

جیولری میں جہاں لمبے ٹسلز ایئر رنگ متعارف کرائے گئے وہیں نیکلیس میں چوکر کا فیشن بھی آچکا ہے۔ یہ ہر اسٹائل کے لباس پر پہنا جاسکتا ہے جو کہ نہایت خوبصورت لگتا ہے۔

یہ گردن سے بلکل لگا ہوا ہوتا ہے۔ ڈیزائنر نے اسے بھی نت نئے انداز میں پیش کیا ہے جس کی فیشن کی دنیا میں الگ ہی دھوم ہے۔ فیشن ٹرینڈز کو دیکھتے ہوئے چوکر نوجوان لڑکیوں کے ساتھ خواتین کا بھی دیدہ زیب فیشن ہے۔

ہینڈ بیگ:

خواتین کی شاپنگ میں اگر ہینڈ بیگ نہ ہو تو سب کچھ ادھورا سا لگتا ہے اور اس کی ایک وجہ عیدی اکٹھا کرنا بھی تو ہوسکتی ہے۔

رنگا رنگ ملبوسات اور دیگر چیزوں کے ساتھ خواتین کے لیے پرس بھی ایک سے ایک  اسٹائل میں سامنے آئے ہیں۔ ایک سے لے کر ملٹی کلرز کے ہینڈ بیگز کو ہر لباس کے ساتھ آسانی سے میچ کیا جاسکتا ہے۔

اس کی سجاوٹ میں فلورل پرنٹ اور نگینے بھی شامل ہیں۔ اس وقت خواتین اپنے فیشن کے اس حصے میں چھوٹے کلچز کے ساتھ بڑے بیگ بھی پسند کررہی ہیں۔

میک اپ:

عید سمیت کوئی بھی خاص موقعہ ہو، میک اپ کے بغیر خواتین کی تمام تیاری پھیکی رہتی ہے کیونکہ اس کے بغیر خواتین کا سجنا سنورنا ناممکن ہے۔

میک اپ میں زیادہ تر شمری گلیٹر میک اپ پسند کیا جارہا ہے جو جلد کے نقوش کو نمایاں کرتا ہے اور خوبصورتی کو ابھار دیتا ہے۔

لباس کا رنگ اگر سرخ ہو تو لپ اسٹک شائنی انگلش رنگوں کی پسند کی جاتی ہے۔

آنکھوں پر کاجل یا لمبا لائنر دلکش دکھائی دیتا ہے۔ آئی شیڈز سافٹ رنگ کے استعمال کیے جارہے ہیں۔

رخساروں کی سرخی بڑھانے کے لیے بلش آن میٹ اور گلیمرس رنگ کے استعمال کیے جارہے ہیں۔

ہیئر اسٹائل:

عید کے موقع پر خواتین جہاں دلکش دکھائی دینے کے لیے کپڑوں سمیت میک اپ اور جیولری محنت کرتی ہیں وہیں بالوں کے انداز بھی ان کے فیشن میں خاصی اہمیت رکھتے ہیں۔

خوبصورتی کا انحصار بالوں سے بھی ہوتا ہے اور بالوں کے مختلف خوبصورت اسٹائل سے شخصیت میں نمایاں تبدیلی آجاتی ہے جو کہ خواتین کی خوبصورتی کو مزید نکھار دیتی ہے۔

ہیئراسٹائلرز نے ہر سال کی طرح اس سال بھی منفرد ہیئرکٹ کو متعارف کرایا جن میں شارٹ ہیئراسٹائل کو خواتین اور بالخصوص لڑکیوں کی جانب سے خاصہ پسند کیا گیا ہے۔

شارٹ شرٹز، فلیپر اور سگریٹ پینٹ کے فیشن ٹرینڈ کے ساتھ شارٹ ہیئر اسٹائل کو بھی اپنایا جارہا ہے۔

یہ اسٹائل فارمل سیمی فارمل اور عام طورپر پہنے جانے والے تمام ملبوسات پر نہایت خوبصورت لگتا ہے۔

خواتین کا کہنا ہے کہ اس وقت عید موسم گرما میں ہے اور اس میں لمبے بالوں کے نسبت شارٹ ہیئرز آسانی سے سنبھل جاتے ہیں جس سے گرمی کا احساس بھی کم ہوتا ہے۔

لیجیے تو پھر ہوگئی آپ کی عید کی تیاری!


عفرا فاطمہ جیو نیوز میں بطور ایسوسی ایٹ پروڈیوسر کام کرتی ہیں۔

Advertisement