Can't connect right now! retry
Advertisement

پاکستان
23 نومبر ، 2017
,

بیروزگاری اور مہنگائی، کرپشن سے زیادہ بڑے مسائل


پاکستانیوں کی اکثریت کا ماننا ہے کہ ملک کا سب سے بڑے مسائل بیروزگاری اور مہنگائی، کرپشن سے بھی زیادہ بڑے مسائل ہیں۔

جنگ، جیو نیوز کے گیلپ پاکستان اور پلس کنسلٹنٹ کے اشتراک سے اکتوبر 2017 میں کیے گئے میں مرد و خواتین سے ملک کے سب سے بڑے مسئلے کے بارے میں پوچھا گیا۔

گیلپ پاکستان کے نتائج میں یہ بات سامنے آئی کہ 22 فیصد افراد کے نزدیک بیروزگاری ملک کا سب سے بڑا مسئلہ ہے جب کہ 21 فیصد افراد کا کہنا تھا کہ سب سے بڑا مسئلہ مہنگائی ہے۔ 14 فیصد افراد نے کرپشن، 8 فیصد نے بجلی کے بحران ،8 فیصد نےغربت ،7 فیصد نے دہشتگردی اور 3 فیصد نے ناخواندگی کو سب سے بڑا مسئلہ قرار دیا جب کہ 2 فیصد کا کہنا تھا کہ امن و امان پاکستان کا اہم مسئلہ ہے۔ 15 فیصد افراد کے نزدیک دیگر مسائل اہم ہیں۔

پلس کنسلٹنٹ کے سروے کے نتائج میں بیروزگاری کو 59 فیصد افراد نے ملک کا سب سے بڑا مسئلہ قرار دیا۔ 58 فیصد افراد کا خیال تھا کہ مہنگائی ملک کا اہم مسئلہ ہے۔

البتہ پلس کنسلٹنٹ کے سروے میں توانائی بحران کو 31 فیصدافراد نے ملک کا اہم مسئلہ قرار دیتے ہوئے تیسرے نمبر پر رکھا۔

اس کے بعد غربت کو 26 فیصد اور کرپشن کو 24 فیصد افراد نے اہم مسائل قرار دیا۔ دہشتگردی کو 15 فیصد، ناخواندگی کو 12 فیصد ، سوئی گیس کے مسائل کو 9 فیصد، پانی کے کمی کو 5 فیصد،صاف پانی کی عدم فراہم کو 3 فیصد، ناانصافی کو 4 فیصد، جبکہ رشوت خوری کو بھی 4 فیصد نے ملک کا اہم مسئلہ قرار دیا۔



ادارتی نوٹ:

یہ سرویز بین الاقوامی سطح پر تسلیم شدہ پاکستانی اداروں گیلپ پاکستان، پلس کنسلٹنٹ نے جنگ-جیو -نیوز (JGN)کےلیے الگ الگ کیے ہیں ۔ ان میں مجموعی طور پر ملک بھر سے شماریاتی طور پرمنتخب 6 ہزار سے زائد افراد نے حصہ لیا ۔

یہاں واضح رہے کہ اس پول کے لیے دو مختلف اداروں کی خدمات حاصل کرنے کا مقصد رائے عامہ کو مزید شفاف طریقے سے سامنے لانا ہے۔اس قسم کے سرویز کو حتمی تصور نہیں کیا جا سکتا اور یہ صرف رائے عامہ کا ایک جائزہ پیش کرتے ہیں اور ان میں غلطی کی گنجائش ہوتی ہے ۔

دنیا کے بڑے میڈیا ہاؤسز رائے عامہ کو جاننے کے لیے وقتاً فوقتاًاس قسم کے سروے کرواتے ہیں ۔ جیو نیوز پاکستان کا بڑا میڈیا ہاؤس ہونے کے ناطے ماضی میں بھی اس قسم کے سرویز قومی امور پر پیش کرتا رہا ہے ۔

Advertisement