Can't connect right now! retry

صحت و سائنس
11 جنوری ، 2018

ملتان:موسمی انفلوئنزا کا ایک اور مریض دم توڑ گیا، تعداد 19 ہوگئی

25دن میں نشتر اسپتال میں انفلوئنزا سے جاں بحق افراد کی تعداد 19 ہوچکی ہے—۔ فائل فوٹو

ملتان: نشتر اسپتال میں موسمی انفلوئنزا وائرس میں مبتلا ایک اور مریض دم توڑ گیا، جس کے بعد 25 دن میں اس وائرس سے جاں بحق ہونے والے افراد کی تعداد 19 ہوگئی ہے۔

اسپتال ذرائع کے مطابق آج دم توڑنے والی 45 سالہ مریم کا تعلق ملتان سے ہے۔

ملتان کے نشتر اسپتال میں اس وقت بھی موسمی انفلوئنزا میں مبتلا 28 مریض زیرِعلاج ہیں۔

گزشتہ 25 دنوں میں موسمی انفلوانزا کے شبہ میں 137 مریضوں کو نشتر اسپتال لایا گیا ہے، جن میں سے اب تک 67 افراد میں انفلوانزا وائرس کی تصدیق ہوئی ہے۔

دوسری جانب محکمہ صحت کی جانب سے شہریوں کو احتیاطی تدابیر پر سختی سے عمل کرنے کی ہدایت کی جارہی ہے، خصوصاً پانی ابال کر پینے کی سخت ہدایت دی گئی ہے۔

دوسری جانب اسپتالوں میں انفلوئنزا کے مریضوں کو بہترین طبی امداد فراہم کرنے کا حکم بھی دیا گیا ہے، تاہم نشتر اسپتال میں قائم فلو کاؤنٹر سے عام شہریوں کو ویکسینیشن فراہم نہ کیے جانے پر شہریوں کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔


Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM