Can't connect right now! retry

کاروبار
01 اکتوبر ، 2019

چینی کی قیمت اچانک بڑھنے پر ممبر ایف بی آر بھی لاعلم

فائل فوٹو

اسلام آباد: فیڈرل بورڈ آف ریونیو (ایف بی آر) کے ممبر نے بھی چینی کی قیمت میں اچانک اضافے پر لاعلمی کا اظہار کردیا۔

مسلم لیگ (ن) کی عائشہ غوث پاشا کی زیرصدارت قومی اسمبلی کی ذیلی کمیٹی خزانہ کا اجلاس ہوا جس میں ممبر ایف بی آر نے بتایا کہ پانچ اشیا پرسیلز ٹیکس بڑھانے سے مہنگائی بڑھتی ہے، شوگر،گھی، پیٹرول، چائے اور سگریٹس پر ٹیکس بڑھایا گیا ہے۔

ممبر ایف بی آر نے بتایا کہ ٹیکس بڑھنے سے چینی کی قیمت میں 3 روپے 62 پیسے اضافہ ہوا، گھی پر 50 پیسے فی کلوکا ٹیکس لگایا گیا ہے، پیٹرول کی قیمت ڈالرکی قدر میں اضافے سے بڑھی ہے۔

ممبر ایف بی آر کا کہنا تھا کہ حکومت کو چینی کی قیمت کنٹرول کرنا چاہیے تھا، چینی کی قیمت 50 روپے سے 72روپے تک پہنچنا سمجھ میں نہیں آیا، شوگر ملز کے پاس مارچ تک کا پرانا اسٹاک موجود تھا۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM