Can't connect right now! retry

دلچسپ و عجیب
10 فروری ، 2020

طوفان کیارہ کے باعث برطانوی ائیرلائنز نے تیز ترین پرواز کا ریکارڈ بنالیا

برطانیہ میں آئے سمندری طوفان کیارہ کے باعث برٹش ائیرویز کی نیویارک سے لندن پرواز نے تیز ترین پرواز کا ریکارڈ بنالیا۔

برطانیہ اِس وقت سمندری طوفان کیارہ کی زد میں ہے جس کے باعث نظام زندگی درہم برہم ہوگیا ہے۔

طوفان کے باعث برطانیہ میں شدید ہواؤں کے جھکڑ چل رہے ہیں جس کے نتیجے میں کئی مقامات پر درخت گرگئے ہیں جس سے کافی مالی نقصان ہوا ہے لیکن وہیں یہ جھکڑ برٹش ائیرویز کے لیے تیز ترین پرواز کا ذریعہ بن گئے ہیں۔

غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق برطانوی ائیرلائنز کی نیویارک سے لندن آنے والی پرواز نے تیز ترین پرواز کا ریکارڈ بنالیا ہے۔

برٹش ائیرویز کی بوئنگ 747 کی نیویارک سے آنے والی پرواز وقت سے سوا گھنٹہ پہلے ہی لندن کے ہیتھرو ائیرپورٹ پر پہنچی جس نے سب کو حیرت میں ڈال دیا ہے۔

رپورٹ کے مطابق طوفانی ہواؤں کے جھکڑ سے گزرنے کے لیے طیارے کا پائلٹ جہاز کی رفتار کو 825 میل فی گھنٹہ (1327 کلومیٹر فی گھنٹہ) پر لے گیا جس کے باعث یہ پرواز مقررہ وقت سے قبل ہی لندن کے ہیتھرو ائیرپورٹ پر پہنچ گئی۔

ایوی ایشن ماہرین کے مطابق نیویارک سے لندن پہنچنے والی پرواز کا دورانیہ 6 گھنٹے 13 منٹ ہے لیکن یہ پرواز 4 گھنٹے 56 منٹ پر منزل پر پہنچی یوں اس پرواز نے سوا گھنٹہ قبل ہی منزل پر لینڈ کیا۔

ایوی ایشن ماہرین نے برٹش ائیرویز کی پرواز کو غیر معمولی قرار دیا ہے جبکہ ائیرویز حکام کا کہنا ہے کہ رفتار کے حوالے سے حفاظتی اقدامات ہمیشہ ہماری ترجیح رہے ہیں۔

فلائٹ ریڈار 24 کے مطابق اس سے قبل ایک نارویجین فلائٹ نے 5 گھنٹے 13 منٹ میں نیویارک سے لندن پہنچ کر عالمی ریکارڈ بنایا تھا۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM