دنیا
05 دسمبر ، 2021

پاکستان بتائے نفرت پھیلانے والوں کیخلاف کیا اقدامات کیے؟ یورپی یونین

حکومت پاکستان نے نفرت پھیلانے والوں کے خلاف کیا کیا؟یورپی یونین فوٹوفائل
 حکومت پاکستان نے نفرت پھیلانے والوں کے خلاف کیا کیا؟یورپی یونین فوٹوفائل

یورپی یونین نے  پاکستان میں انسانی حقوق کی صورت حال پر تشویش کا اظہار کیا ہے۔

یورپی یونین کا  اپنے ایک بیان میں کہنا تھا کہ  پاکستان میں حالیہ مذہبی انتہاپسندی اور عدم برداشت پر تشویش ہے۔

یورپی یونین نے اپنے بیان میں پاکستان میں  آزادی اظہار اور آزادی صحافت پر لگائی گئی  پابندیوں پر بھی تشویش کا اظہار کیا اور کہا کہ جبری گمشدگیاں، تشدد اور انصاف کے حصول میں رکاوٹیں ناقابلِ قبول ہیں۔

یورپی یونین نے سوال اٹھایا کہ  حکومت پاکستان نے نفرت پھیلانے والوں کے خلاف کیا اقدامات کیے؟

واقعے کا پس منظر

خیال رہے کہ 3 دسمبر کو سیالکوٹ میں اسپورٹس گارمنٹ کی فیکٹری کے سری لنکن منیجر پریانتھا کمارا پر فیکٹری ورکرز نے مذہبی پوسٹر اتارنے کا الزام لگا کر حملہ کیا، پریانتھا کمارا جان بچانے کیلئے بالائی منزل پر بھاگے لیکن فیکٹری ورکرز نے پیچھا کیا اور انہیں چھت پر گھیر لیا۔

انسانیت سوز خونی کھیل کو فیکٹری گارڈز روکنے میں ناکام رہے، فیکٹری ورکرز منیجر کو مارتے ہوئے نیچے لائے، مار مار کر جان سے ہی مار دیا، اسی پر بس نہ کیا، لاش کو گھسیٹ کر فیکٹری سے باہر چوک پر لے گئے، ڈنڈے مارے، لاتیں ماریں اور  پھر آگ لگا دی۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM