دنیا
14 دسمبر ، 2021

کینیڈین فوج میں 6 سالوں کے دوران 800 سے زائد جنسی حملے اور ہراسانی کے واقعات رپورٹ

کینیڈین فوج میں 6 برسوں کے دوران اب تک جنسی حملوں کے 581 اور جنسی ہراسانی کے 221 واقعات رپورٹ ہوئے ہیں۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق 6 سال کے قلیل عرصے میں ہزار کے قریب جنسی حملے و ہراسانی کے واقعات رپورٹ ہونے  پر کینیڈین وزیردفاع  انیتا آنند  اور چیف آف ڈیفنس اسٹاف  کینیڈا جنرل وین نے معذرت بھی کر لی ہے۔

 اس حوالے سے گفتگو کرتے ہوئے کینیڈا کے  وزیر دفاع اور چیف آف ڈیفنس اسٹاف نے اعتراف کیا کہ کینیڈا اپنے فوجیوں کے تحفظ میں ناکام رہا ہے۔

کینیڈا کے چیف آف ڈیفنس  اسٹاف جنرل وین کا اس حوالے سے کہنا تھا کہ اعتماد ہی زندگی اور موت میں فرق ہے اور  ہم نے اس امانت میں خیانت کی ہے۔

  وزیر دفاع انیتا آنند نے کہا کہ کینیڈین حکومت کی طرف سے جنسی بدسلوکی کے معاملے پر معافی مانگتی ہوں، ہمیں اس درد اور صدمے کا مداوا کرنا چاہیے جو بہت سے لوگوں نے برداشت کیا، ملک کی حفاظت اور دفاع کرنے کا ذمہ دار ادارہ ہمیشہ اپنے اراکین کی حفاظت اور دفاع نہیں کرتا۔

  دوسری جانب کینیڈین وزیردفاع نے معاملے کی تحقیقات سویلین حکام کے سپرد کرنے کی تجویز کی حمایت کی ہے۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM