کھیل
24 جنوری ، 2022

چینی ٹینس اسٹار کی حمایت والی شرٹس پر پابندی پر ٹینس آسٹریلیا کو تنقیدکا سامنا

فوٹو: فائل
فوٹو: فائل

امریکی کی سابق ٹینس اسٹار مارٹینا نیوراتیلووا نے آسٹریلین اوپن کی انتظامیہ کی جانب سے چینی ٹینس اسٹار پینگ شوئی کی حمایت کرنے والے نعروں پر مبنی ٹی شرٹس پہننے پر پابندی عائدکرنےکے فیصلےکو تنقید کا نشانہ بنایا ہے۔

رپورٹس کے مطابق آسٹریلیا میں جاری ٹینس ٹورنامنٹ میں جمعے کے روز سکیورٹی عملے نے اسٹیڈیم میں آنے والے شائقین کو ایسی ٹی شرٹس اتارنےکو کہا تھا جن پر 'پینگ شوئی کہاں ہے؟' لکھا ہوا تھا۔

سابق ٹینس اسٹار مارٹینا نیوراتیلووا نے ٹوئٹر پر آسٹریلین اوپن کی انتظامیہ کے فیصلے پر ردعمل دیتے ہوئے اسے افسوس ناک قرار دیا اور کہا کہ ویمن ٹینس ایسوسی ایشن اس معاملے پر تنہا کھڑی ہے۔

فرانسیسی ٹینس اسٹار نکولس مہوت نے بھی آسٹریلین اوپن کی انتظامیہ پر تنقیدکرتے ہوئےکہا ہےکہ وہ بڑے چینی اسپانسرز کے دباؤ کے سامنے جھک رہے ہیں۔

ہیومن رائٹس واچ آسٹریلیا کی رکن سوفی مکنیل نے بھی واقعے پر افسوس کا اظہار کرتے آسٹریلین اوپن میں شریک دیگر ٹینس کھلاڑیوں پر زور دیا ہےکہ وہ پینگ شوئی کے معاملے پر آواز اٹھائیں۔

دوسری جانب ٹینس آسٹریلیا نے اپنے فیصلے کا دفاع کرتے ہوئے کہا ہےکہ  پینگ شوئی کی حفاظت ان کے لیے اہم ہے تاہم اسٹیڈیم میں داخلے کی شرائط کے تحت ہم ایسے لباس، بینرز یا نشانات کی اجازت نہیں دیتے جو سیاسی یا تجارتی ہوں۔

خیال رہےکہ چینی ٹینس اسٹار پینگ شوئی نے گذشتہ سال نومبر میں چین کے سابق نائب وزیراعظم پر جنسی زیادتی کا الزام لگایا تھا جس کے بعد سے وہ منظر عام سے غائب ہوگئی تھیں۔

پینگ شوئی کےغائب ہونے کے بعد امریکا سمیت ویمن ٹینس کی عالمی تنظیم نے مطالبہ کیا تھا کہ پینگ شوئی کی حفاظت کو یقینی بنایا جائے اور ان کے خیریت سے ہونے کے شواہد سامنے لائے جائیں، بعد ازاں نومبر میں ہی پینگ شوئی نے انٹرنیشنل اولمپک کمیٹی کے صدر سے30 منٹ تک ویڈیو کال پر گفتگو کی تھی اور انہیں بتایا تھا کہ وہ بیجنگ میں اپنےگھرپرمحفوظ ہیں اور فی الحال ذاتی زندگی میں مداخلت نہیں چاہتیں۔

اس گفتگو کے بعد خواتین کھلاڑیوں کی عالمی تنظیم ویمن ٹینس ایسوسی ایشن (ڈبلو ٹی اے) نے پینگ شوئی کی ویڈیو کال کو ان کی حفاظت سے متعلق ناکافی ثبوت قرار دیا اور پینگ شوئی پرمبینہ پابندیوں کے تناظر میں چین اور ہانگ کانگ میں تمام ٹورنامنٹس فوری طور پر معطل کرنے کا اعلان کیا۔

ویمن ٹینس ایسوسی ایشن کے سخت ردعمل کے بعد پینگ شوئی نے دسمبر میں ذرائع ابلاغ کے لیے جاری کی گئی ایک ویڈیو میں خود پر جنسی حملے کی تردید کرتے ہوئے کہا تھا کہ انہوں نے کبھی یہ نہیں کہا کہ کسی نے مجھ پر جنسی حملہ کیا تھا تاہم اس ویڈیو بیان کے بعد بھی ان کے حوالے سے شکوک و شبہات ختم نہیں ہوسکے ہیں۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM