کھیل
17 اگست ، 2022

آسٹریلوی آل راؤنڈر کا حسنین کے ایکشن پر اشارہ، شعیب اختر نے کھری کھری سنا دیں

مارکس اسٹوئنس نے آؤٹ ہونے پر حسنین کے بولنگ ایکشن سے متعلق اشارہ کیا تھا۔ فوٹو فائل
مارکس اسٹوئنس نے آؤٹ ہونے پر حسنین کے بولنگ ایکشن سے متعلق اشارہ کیا تھا۔ فوٹو فائل  

آسٹریلوی آل راؤنڈر مارکس اسٹوئنس کی جانب سے قومی ٹیم کے نوجوان فاسٹ بولر محمد حسنین کے بولنگ ایکشن پر تنقید پر سابق اسپیڈ اسٹار شعیب اختر نے کینگروز  آل راؤنڈر کو کھری کھری سنا دیں۔

آسٹریلیا میں جاری ’دی ہنڈریڈ‘ لیگ کے دوران تین روز قبل ہونے والے میچ میں محمد حسنین نے ٹیم ’ساؤدرن بریوو‘ کی طرف سے کھیلنے والے آسٹریلوی بیٹر مارکس اسٹوئنس کو جیکب کے ہاتھوں کیچ آؤٹ کرایا۔

اسپورٹس مین اسپرٹ سے نابلد آسٹریلوی بیٹر نے آؤٹ ہونے پر انتہائی ناگواری کا اظہار کیا اور آؤٹ ہو کر پویلین جاتے ہوئے ایسا اشارہ کیا جیسے وہ کہہ رہے ہوں کہ حسنین کا ایکشن ٹھیک نہیں ہے۔

یاد رہے کہ محمد حسنین کا بولنگ ایکشن رواں برس کے آغاز میں بگ بیش لیگ کے دوران غیر قانونی قرار دیا گیا تھا تاہم انہوں نے اپنے ایکش پر کام کیا اور اپنا ایکشن درست کرنے کے بعد انہیں حال ہی میں دوبارہ کرکٹ کھیلنے کی اجازت ملی تھی۔

آسٹریلوی بیٹر کی اس حرکت پر انہیں کڑی تنقید کا سامنا ہے اور قومی ٹیم کے سابق اسپیڈ اسٹار شعیب اختر نے بھی مارکس اسٹوئنس کو آڑے ہاتھوں لیا ہے۔

شعیب اختر نے ٹوئٹر پر لکھا کہ مارکس اسٹوئنس نے دی ہنڈریڈ کے دوران محمد حسنین کے بولنگ ایکشن کے حوالے سے انتہائی شرمناک حرکت کی، آپ ہوتے کون ہو ایسی حرکت کرنے والے؟ آئی سی سی ان کے حوالے سے بالکل خاموش رہتا ہے۔

قومی ٹیم کے سابق فاسٹ بولر نے لکھا کہ اگر ایک بولر کلیئر ہو چکا ہے تو کسی بھی کھلاڑی کو ایسی حرکت کرنے کی اجازت نہیں ہونی چاہیے۔

محمد حسنین نے شعیب اختر کی جانب سے حمایت کرنے پر ان کا شکریہ بھی ادا کیا۔

 

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM