پاکستان
23 ستمبر ، 2022

رواں برس پاکستان کی جی ڈی پی گروتھ دو فیصد تک رہنے کا امکان: ذرائع

عالمی ترقیاتی شراکت داروں کے ماہرین نقصانات کی رپورٹ کو 15 اکتوبر تک حتمی شکل دیں گے — فوٹو: فائل
عالمی ترقیاتی شراکت داروں کے ماہرین نقصانات کی رپورٹ کو 15 اکتوبر تک حتمی شکل دیں گے — فوٹو: فائل

حالیہ سیلاب کی تباہ کاریوں کے باعث پاکستان کی جی ڈی پی گروتھ کا ہدف 5.01 کے بجائے دو فیصد تک رہنے کا امکان ہے۔ رواں مالی سال کیلئے جی ڈی پی گروتھ کا ہدف 5.01 فیصد مقرر کیا گیا تھا۔

ذرائع  وزارت منصوبہ بندی کا کہنا ہے کہ سیلاب کے نقصانات اور بحالی کا تخمینہ 30ارب ڈالر تک ہو سکتا ہے۔

وزارت منصوبہ بندی کے ذرائع کے مطابق پاکستان 10 عالمی ترقیاتی شراکت داروں کی مدد سے سیلاب نقصانات کے تخمینے لگا رہا ہے۔

ذرائع کے مطابق نقصانات کا تخمینہ عالمی بینک، ایشین ڈویلپمنٹ بینک، یورپی یونین اور اقوام متحدہ کے ماہرین کی مدد سے لگایا جا رہا ہے۔

عالمی ترقیاتی شراکت داروں کے ماہرین نقصانات کی رپورٹ کو 15 اکتوبر تک حتمی شکل دیں گے۔

رواں برس سیلاب سے 113 اضلاع متاثر ہوئے، 83 اضلاع کو آفت زدہ قرایا دیا گیا جبکہ سیلاب کے باعث کپاس کی اڑھائی سے تین ملین بیلز کے نقصان کا تخمینہ لگایا گیا ہے۔

ذرائع کے مطابق 3 ارب ڈالر متاثرہ علاقوں میں گھروں کی تعمیر نو کیلئے درکار ہونگے جبکہ ریلوے ٹریکس، پلوں اور دیگر انفراسٹرکچر کی بحالی کیلئے 2 ارب 3 کروڑ ڈالر کا تخمینہ لگایا گیا ہے۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM