دلچسپ و عجیب
24 ستمبر ، 2022

پرفیوم سے چِڑ کر دلہے نے ساس کو وینیو ہی چھوڑنے کا کہہ دیا

فوٹو: فائل
فوٹو: فائل

انٹرنیٹ پر ان دنوں ایک دلہے کے چرچے ہیں جس نے اپنی ساس کے پرفیوم سے تنگ آکر انہیں شادی کا وینیو ہی چھوڑنے کا کہہ دیا۔

غیر ملکی میڈیا رپورٹس کے مطابق 22 ستمبر کو ویب سائٹ ریڈٹ پر ایک صارف کی جانب سے کی گئی پوسٹ وائرل ہوئی جس میں بتایا گیا کہ 'میں نے شادی کے روز ساس کو وینیو چھوڑ دینے کا کہا کیونکہ ان کا پرفیوم مجھے پریشان کر رہا تھا'۔

صارف نے لکھا 'میری زندگی کے خاص دن پر اس پرفیوم کی مہک میرے سر میں درد کر رہی تھی، بار  بار مجھے چھینکیں آرہی تھیں اور  آنکھوں سے پانی بہنے لگا تھا، میری زیادہ بری حالت اس وقت ہوئی جب ساس نے مجھے گلے لگایا'۔

دلہے کے مطابق 'اس پرفیوم کی وجہ سے میرا وہاں کھڑا رہنا دوبھر ہوگیا اسی لیے میں بیچ فوٹو سیشن سے چلا گیا جس پر میری دلہن نے اپنی والدہ کو مجھ سے دور  رہنے کا مشورہ دیا'۔

ریڈٹ پوسٹ میں بتایا گیا کہ 'اس کے بعد بھی میرے سر میں درد برقرار  رہا تو میں نے اپنی ساس سے کپڑے بدلنے کا کہا اور  یہ بھی کہا کہ اگر  وہ یہ نہیں کر سکتیں تو وینیو سے ہی چلی جائیں'۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM