انٹرٹینمنٹ
26 ستمبر ، 2022

18 سال کی تھی جب والد اغوا ہوئے اور وہ اب تک لاپتہ ہیں: ماڈل مُشک کلیم کا انکشاف

فوٹو: انسٹاگرام/مشک کلیم
فوٹو: انسٹاگرام/مشک کلیم

پاکستان کی نامور  ماڈل مشک کلیم نے انکشاف کیا ہے کہ ان کے والد کو اغوا کیا گیا تھا جو اب تک گھر واپس نہیں آئے ہیں۔

ان دنوں سوشل میڈیا پر مشک کلیم کے ویب شو کو دیے گئے ایک پرانے انٹرویو کا  کلپ وائرل ہے جس میں  ماڈل سے ان کے والدین سے متعلق میزبان عفت عمر نے سوال کیا۔

جواب میں مشک نے بتایا کہ 'ہم چار بہن بھائی ہیں اور ہم نے 2013 میں اپنے والد کو کھو دیا تھا، انہیں نائیجیریا سے اغوا کیا گیا تھا اور وہ اب تک واپس نہیں آئے'۔

مشک کلیم نے بتایا کہ 'اب ان کے والد کو فیملی سے بچھڑے 9 برس ہو چکے ہیں جن کی اب تک کوئی خیر خبر نہیں ملی'۔

انہوں نے کہا 'میرا ماننا ہے کہ انسان کو ہر حال میں اللہ پاک کا شکر ادا کرنا چاہیے، جب یہ ہوا میرا بڑا بھائی 19 سال کا تھا اور دو چھوٹے بھائی کافی کم عمر تھے، اس وقت مجھے اندازہ ہوا کہ زندگی کتنی غیر متوقع ہے، آپ کو ہر وقت ہر صورتحال کے لیے تیار  رہنا چاہیے'۔

ماڈل نے کہا کہ 'اس سب کے بعد میری والدہ نے بہت ہمت دکھائی اور میں ان ہی سے متاثر ہوئی، انہوں نے خود ہی ہم چاروں کی پرورش کی، ہمیں پڑھایا، والد کے جانے کے بعد میری امی پتھر کی دیوار بن کر ہمارے سامنے کھڑی ہوئیں'۔

مشک کلیم کے مطابق ان کی والدہ نے کوئی نوکری نہیں کی کیونکہ ان کے والد کی اچھی جاب تھی جس کے باعث ان کے پاس ایک اچھی سیونگ تھی۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM