صحت و سائنس
29 ستمبر ، 2022

اس مشروب کو پینا صحت کے لیے کیوں ضروری ہے؟

یہ بات ایک نئی طبی تحقیق میں سامنے آئی / فائل فوٹو
یہ بات ایک نئی طبی تحقیق میں سامنے آئی / فائل فوٹو

روزانہ 2 سے 3 کپ کافی پینے کی عادت زندگی کا دورانیہ بڑھانے میں مددگار ثابت ہوسکتی ہے۔

یہ بات آسٹریلیا میں ہونے والی ایک طبی تحقیق میں سامنے آئی۔

بیکر ہارٹ اینڈ Diabetes ریسرچ انسٹیٹیوٹ کی تحقیق میں بتایا گیا کہ کافی پینے کی عادت دل کی شریانوں سے جڑے امراض کا خطرہ کم کرنے کے لیے بھی مفید ہے۔

تحقیق میں دریافت کیا گیا کہ روزانہ 2 سے 3 کپ کافی پینے سے اگلے ساڑھے 12 سال کے دوران مختلف امراض سے موت کا خطرہ 27 فیصد تک کم ہوسکتا ہے۔

اس تحقیق میں 4 لاکھ 49 ہزار سے زائد ایسے افراد کو شامل کیا گیا تھا جو امراض قلب سے محفوط تھے۔

ان افراد سے سوالنامے بھروائے گئے تاکہ معلوم ہوسکے کہ وہ روزانہ کتنے کپ کافی پیتے ہیں اور کافی کی کونسی قسم انہیں پسند ہے۔

اس کے بعد اس گروپ کے ڈیٹا کا موازنہ ایسے افراد سے کیا گیا جو اس گرم مشروب سے گریز کرتے تھے۔

عمر، جنس، موٹاپے، ہائی بلڈ پریشر اور دیگر عناصر کو بھی اس حوالے سے مدنظر رکھتے ہوئے دونوں گروپس کا جائزہ ساڑھے 12 سال تک لیا گیا۔

اس عرصے میں27 ہزار 829 افراد ہلاک ہوئے۔

نتائج سے معلوم ہوا کہ کافی پینے کی عادت سے کسی بھی وجہ سے موت کا خطرہ نمایاں حد تک کم ہوجاتا ہے بالخصوص اگر روزانہ 2 سے 3 کپ کافی پی جائے۔

اسی طرح تحقیق کے دوران 43 ہزار 173 افراد میں امراض قلب کی تشخیص ہوئی، مگر کافی پینے والے گروپ میں یہ خطرہ کم دریافت ہوا۔

اس تحقیق میں بتایا گیا کہ لوگوں کو کافی کی کسی بھی قسم کو پینا صحت مند طرز زندگی کا حصہ بنانے پر غور کرنا چاہیے۔

محققین کا کہنا تھا کہ کیفین کافی کا اہم جز ہے مگر اس کے ساتھ ساتھ اس مشروب میں 100 سے زیادہ حیاتیاتی مرکبات موجود ہوتے ہیں جو صحت پر مثبت اثرات مرتب کرتے ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ معتدل مقدار میں کافی پینے سے دل کی صحت کو فائدہ ہوتا ہے۔

اس تحقیق کے نتائج یورپین جرنل آف Preventive Cardiology میں شائع ہوئے۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM