Can't connect right now! retry

صحت و سائنس
31 مئی ، 2021

کینسر کا ہر تیسرا کیس سگریٹ نوشی کا ہوتا ہے: طبی ماہرین

طبی ماہرین کا کہنا ہے کہ پاکستان میں کورونا سے 21 ہزار اموات ہوئیں جب کہ سالانہ ایک لاکھ 60 ہزار سے زائد افراد کینسر کے باعث مرتے ہیں۔ 

پریس کلب لاہور میں نوٹوبیکو ڈے کی مناسبت سے آنکولوجی آف پاکستان کے زیر اہتمام طبی ماہرین نے پریس کانفرنس کی۔ 

کینسرسرجیکل پاکستان کے صدر پروفیسر ارشد چیمہ کا کہنا تھا کہ ہر تیسرا کینسر سگریٹ نوشی سے ہو رہا ہے، کراچی میں 40 فیصد اورل کینسر ہے، 2007 کی کنگ ایڈورڈ میڈیکل کالج کی ریسرچ سے سامنے آیا ہے کہ میڈیکل کی 11 فیصد طالبات اور 27 فیصد طلبا سگریٹ نوشی کرتے ہیں۔

وائس چانسلر یونیورسٹی آف ہیلتھ سائنسز ڈاکٹر جاوید اکرم کا کہنا تھا کہ مردانہ کمزوری کی سب سے بڑی وجہ سگریٹ نوشی ہے، سگریٹ کے ایک کش میں ساڑھے چار ہزار خطرناک کیمیکلز ہوتے ہیں جو کینسر کا باعث بنتا ہے۔

طبی ماہرین کا کہنا ہے کہ تمباکو کے کاغذ جلنے سے پیدا ہونے والا دھواں زیادہ خطرناک ہوتا ہے۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM