معروف بھارتی گلوکار قاتلانہ حملے میں ہلاک

پنجابی گلوکار سدھو موسے والا قاتلانہ حملے میں ہلاک ہوگئے—فوٹو:فائل
پنجابی گلوکار سدھو موسے والا قاتلانہ حملے میں ہلاک ہوگئے—فوٹو:فائل

بھارت:  پنجابی گلوکار سدھو موسے والا  قاتلانہ  حملے میں ہلاک ہوگئے۔

بھارتی میڈیا رپورٹس کے مطابق  پنجابی گلوکار سدھو موسے  والا کو اتوار کو ضلع مانسا کے گاؤں جواہرکے میں نامعلوم حملہ آوروں نے گولیاں مار کر ہلاک کر دیا۔

رپورٹس کے مطابق نامعلوم افراد نے سدھو کی گاڑی پر حملہ کیا اور 30 سے زائد گولیاں برسائیں جس کے نتیجے میں سدھو اور گاڑی میں موجود دیگر 2 افراد شدید زخمی ہوگئے جنہیں اسپتال منتقل کیا گیا۔

تاہم سدھو موسے والا اسپتال میں زندگی کی بازی ہار گئے جبکہ دیگر 2 زخمیوں کی حالت   تشویش ناک ہے۔ 

رپورٹس کے مطابق سدھو موسے والا نے اس سال کانگریس کے ٹکٹ پرمانسا سے پنجاب اسمبلی کا الیکشن  لڑا تھا لیکن انہیں عام آدمی پارٹی کے امیدوار وجے سنگلا نے63 ہزار  ووٹوں کے بڑے فرق سے شکست دی تھی۔

بھارتی میڈیا کے مطابق گزشتہ ماہ  سدھو  نے اپنے گانے 'Scapegoat' میں عام آدمی پارٹی اور اس کے حامیوں کو نشانہ  بناتے ہوئے ’غدار‘  کہا تھا۔

رپورٹس کے مطابق ایک روز قبل ہی پنجاب حکومت کی جانب سے  وی آئی پی کلچر خاتمے کی کوششوں کے تحت ان کی سکیورٹی واپس لے لی گئی تھی لہٰذا سدھو وزیراعلیٰ بھگونت مان سے سکیورٹی سے متعلق ملاقات کے لیے جارہے تھے۔

دوسری جانب پولیس نے دعو یٰ کیا ہے کہ  سدھو موسے والا پر فائرنگ کی ذمہ داری کینیڈا سے تعلق رکھنے والے گینگسٹر نے قبول کی ہے۔

گلوکار کی ہلاکت کی خبر سامنے آتے ہی بھارتی فلم انڈسٹری اور سیاستدانوں نے ان کی موت پر شدید دکھ اور غم کا اظہار کیا۔ 

واضح رہے کہ سدھو موسے والا 17 جون 1993 کو پیدا ہوئے، ان کا تعلق ضلع مانسا کے گاؤں موس والا سے تھا۔ پنجابی گلوکار کے مداحوں کی تعداد لاکھوں میں تھی اور وہ اپنے ریپ کے لیے مشہور تھے۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM