دنیا
20 جون ، 2022

بھارت اور بنگلادیش میں سیلاب سے تباہی، 90 سے زائد ہلاکتیں، لاکھوں بے گھر

بنگلادیشی حکام نے 2004 میں آنے والے سیلاب کے بعد اسے بدترین سیلاب قرار دیا ہے/ فوٹو بشکریہ بی بی سی
بنگلادیشی حکام نے 2004 میں آنے والے سیلاب کے بعد اسے بدترین سیلاب قرار دیا ہے/ فوٹو بشکریہ بی بی سی

بھارت اور بنگلادیش میں سیلاب سے ہونے والی ہلاکتوں کی تعداد 90 سے تجاوز کرگئی۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق بھارت اور بنگلادیش میں مون سون بارشوں اور اس کے نتیجے میں آنے والے سیلاب نے تباہی مچارکھی ہے جس کے نتیجے میں اب تک 90 سے زائد افراد ہلاک ہوچکے جب کہ لاکھوں دربدر ہوچکے ہیں جب کہ حکام نے آنے والے دنوں میں سیلابی صورتحال مزید خراب ہونے کا خدشہ ظاہر کیا ہے۔

بنگلادیشی حکام نے 2004 میں آنے والے سیلاب کے بعد اسے بدترین سیلاب قرار دیا ہے۔

بنگلادیش میں گزشتہ ہفتے ہونے والی غیر معمولی بارشوں نے ملک کے شمال مشرقی علاقوں میں تباہی مچادی جس کے بعد بے گھر ہونے والے افراد کو اسکولوں میں پناہ دی گئی ہے جب کہ صورتحال سے نمٹنے کے لیے فوجی دستے بھی تعینات کیے گئے ہیں۔

بارش سے متاثرہ شہریوں کا کہنا ہےکہ بارش اور سیلاب سے تمام دیہات ڈوب چکے ہیں جس کے باعث رہائشی انتہائی پریشانی کےعالم میں ہیں۔

دوسری جانب بھارتی ریاست آسام میں بھی شدید بارشوں اور سیلاب سے تقریباً 18 لاکھ افراد متاثر ہوئے ہیں جہاں اب تک 6 ہلاکتیں بھی رپورٹ ہوچکی ہیں جب کہ اپریل سے اب تک ہونے والی بارشوں اور لینڈ سلائیڈنگ کے واقعات میں 62 افراد جان سے جاچکے ہیں۔

اس کے علاوہ ریاست بہار میں بجلی گرنے سے 17 افراد ہلاک ہوئے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق بھارت اور بنگلادیش میں بارشوں اور سیلاب سے 40 لاکھ افراد متاثر ہوئے ہیں جب کہ آئندہ چند دنوں میں صورتحال مزید خراب ہونے کا خدشہ ہے۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM