Election 2024 Election 2024

کھیل
Time 15 دسمبر ، 2022

ڈرافٹنگ مکمل : پی ایس ایل 8 کیلئے کونسا کھلاڑی کس ٹیم کا حصہ بنا؟

فوٹو: کراچی کنگز
فوٹو: کراچی کنگز

پاکستان سپر لیگ( پی ایس ایل) کے آٹھویں ایڈیشن کیلئے ٹیموں کی تشکیل کا عمل مکمل ہوگیا۔

پی ایس ایل 8 کے پلیئرز ڈرافٹ کی تقریب کراچی میں منعقد ہوئی جس میں فرنچائزز کے مالکان، چیئرمین پی سی بی اور کرکٹرز نے شرکت کی۔

پشاور زلمی نے 17 جبکہ دیگر ٹیموں نے 18،18 پلیئرز پر مشتمل اسکواڈ مکمل کرلیا، پشاور زلمی ایک پلیئر کا اعلان بعد میں کرے گی۔

پاکستان کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان محمد حفیظ، کامران اکمل، احمد شہزاد اور سہیل تنویر کو کسی نے پک نہیں کیا۔

اس کے علاوہ غیرملکی کھلاڑیوں میں آسٹریلیا کے ایرون فنچ، جنوبی افریقا کے انگیڈی، وین ڈر ڈوسن اور سابق ویسٹ انڈین کرکٹر کیرون پولارڈ کو بھی کسی فرنچائز نے اپنی ٹیم کا حصہ نہ بنایا۔

 پی ایس ایل کے 8 ویں سیزن کیلئے کونسا کھلاڑی کس ٹیم کا حصہ بنا؟

پلاٹینم کیٹیگری 

پلاٹینم کیٹیگری میں پہلی پک لاہور قلندرز کی تھی جس میں انہوں نے فخر زمان کو اپنی ٹیم کا حصہ بنا لیا۔

 اس کے علاوہ کوئٹہ گلیڈی ایٹرز نے سری لنکا کے ہسارنگا اور نسیم شاہ، ملتان سلطان نے ڈیوڈ ملراور آئرلینڈ کے جوش لٹل،کراچی کنگز نے آسٹریلیا کے میتھیو ویڈ اور  عمران طاہر ،پشاور زلمی نے سری لنکا کے بھنوکا راجا پکسا اور ویسٹ انڈیز کے روومن پاوول جبکہ اسلام آباد یونائیٹڈ نے ایلکس ہیلز  اور افغانستان کے رحمان اللہ گرباز کو اپنے اسکواڈ میں شامل کرلیا۔

ڈائمنڈ کیٹیگری

اسلام آباد یونائٹیڈ نے ڈائمنڈ کیٹیگری میں افغانستان کے فضل حق فاروقی کو  اسکواڈ میں شامل کرلیا۔

اس کے علاوہ پشاور زلمی نے ڈائمنڈ کیٹیگری میں افغانستان کے مجیب الرحمٰن،لاہور قلندرز نے وائلڈ کارڈ استعمال کر کے حسین طلعت، کوئٹہ گلیڈی ایٹرز نے ویسٹ انڈیز کےاوڈین اسمتھ اور کراچی کنگز نے جیمز وینس اورنیوزی لینڈ کے جیمز فلٹر کو اسکواڈ کا حصہ بنالیا۔

گولڈ کیٹیگری

پشاور زلمی نے گولڈ کیٹیگری میں دانش عزیز اور ارشد اقبال کو پک کرلیا جبکہ کوئٹہ گلیڈی ایٹرز نے احسان علی کو اسکواڈ کا حصہ بنالیا۔

اس کے علاوہ لاہورقلندرز نے زمبابوے کے سکندر رضا، اور لیام ڈاؤسن ،ملتان سلطانز نے ویسٹ انڈیز کے عقیل حسین ،کراچی کنگز نے آسٹریلیا کے اینڈریو ٹائی کو گولڈ کیٹیگری میں پک کرلیا۔

سلور کیٹیگری

اسلام آباد یونائٹیڈ نے سلورکیٹیگری میں انگلینڈ کے خلاف دوسرے ٹیسٹ میں شاندار ڈیبیو کرنے والے اسپنر ابرار احمد ،صہیب مقصود اور رومان رئیس کو پک کر لیا۔

اس کے علاوہ کوئٹہ گلیڈی ایٹرز نے سلور کیٹیگری میں عمید آصف اور محمد زاہد،کراچی کنگز نے طیب طاہر اور سینٹرل پنجاب کے وکٹ کیپر محمد اخلاق ،ملتان سلطانز نے اسامہ میر، وکٹ کیپر بیٹر عثمان خان ، ثمین گل، انور علی اور سرور آفریدی ، پشاور زلمی نے صائم ایوب اور عثمان قادر جبکہ لاہور قلندرز نے دلبر حسین، بیٹر طاہر بیگ اور فاسٹ بولر احمد دانیال کو اسکواڈ میں شامل کرلیا۔

ایمرجنگ کیٹیگری

کراچی کنگز نے ایمرجنگ کیٹیگری میں عرفان اللہ نیازی کو پک کرلیا جبکہ پشاورزلمی نے اپنے ٹیلنٹ ہنٹ کے پلیئر صفیان مقیم اور حسیب اللہ کو اسکواڈ کا حصہ بنالیا۔

اس کے علاوہ اسلام آباد یونائیٹڈ نے ایمرجنگ کیٹیگری میں ذیشان ضمیر اورحسن نواز، کوئٹہ گلیڈی ایٹرز نے عبدالواحد بنگلزئی اور ایمل خان جبکہ لاہور قلندرز نے شاویز عرفان کو پک کر لیا۔

سپلیمنٹری کیٹیگری

پشاور زلمی نے سپلیمنٹری کیٹیگری نیوزی لینڈ کے جمی نیشم،ملتان سلطانز نے انگلینڈ کے عادل رشید اور نوجوان عرفان منہاس کو پک کیا۔

اس کے علاوہ کوئٹہ گلیڈی ایٹرز نے نیوزی لینڈ کے مارٹن گپٹل اور عمیربن یوسف، جبکہ لاہور قلندرز نے سپلیمنٹری کیٹیگری میں انگلینڈ کے جارڈن اور جلات خان ،اسلام آباد یونائیٹڈ نے معین علی اور مبسر خان ،کراچی کنگز نے جنوبی افریقا کے تبریز شمسی  اورمحمد عمر کو شامل کیا۔

ٹیموں کے مکمل اسکواڈ:

فوٹو: پی سی ایل
فوٹو: پی سی ایل

ڈرافٹ میں 517 غیر ملکی اور 491 پاکستانی پلیئرز رجسٹرڈ تھے۔

مزید خبریں :