دنیا
23 جنوری ، 2023

پسند کی شادی نہ ہونے پر خودکشی کرنیوالے جوڑے کے مجسموں کی شادی کرادی گئی

گزشتہ برس گجرات کے ضلع تاپی کے ایک گھرانے میں شادی کیلئے والدین کی مخالفت کے بعد لڑکی اور لڑکے کی خودکشی کا واقعہ دیکھنے میں آیا تھا/ فوٹو بھارتی میڈیا
گزشتہ برس گجرات کے ضلع تاپی کے ایک گھرانے میں شادی کیلئے والدین کی مخالفت کے بعد لڑکی اور لڑکے کی خودکشی کا واقعہ دیکھنے میں آیا تھا/ فوٹو بھارتی میڈیا

دنیا بھر میں بچوں کی پسند  پر  والدین کا  شادی سے انکار بھی خودکشی کے واقعات میں اضافہ کردیتا ہے اور ایک ایسا ہی واقعہ بھارتی گجرات میں پیش آیا لیکن خودکشی کے واقعے کے بعد لڑکا لڑکی کی والدین نے ایک انوکھا فیصلہ کیا۔

بھارتی میڈیا کے مطابق گزشتہ برس گجرات کے ضلع تاپی کے ایک گھرانے میں شادی کیلئے والدین کی مخالفت  کے بعد  لڑکی اور لڑکے کی خودکشی کا واقعہ دیکھنے میں آیا تھا۔

تاہم بچوں کی خودکشی پر والدین کو  اپنی غلطی کا احساس ہوا اور اپنی اس تڑپ کو کم کرنے کیلئے  والدین نے بچوں کی خودکشی کے ایک سال بعد ان کے مجسمے بنا کر ان کی شادی کروائی۔

بھارتی میڈیا پر  اس انوکھی اور مجسموں کی شادی کی ویڈیو بھی شیئر کی گئی ہے جس میں پنڈت کو لڑکی اور لڑکوں کے عروسی مجسموں کی شادی کرواتے دیکھا جاسکتا ہے۔

 بھارتی میڈیا رپورٹ کے مطابق  گزشتہ برس تاپی کے رہائشی گنیش اور رنجنا پدوی ایک دوسرے سے شادی کے خواہش مند تھے تاہم والدین کے انکار نے دونوں کی خواہش کو  ناممکن بناڈالا.

بعد ازاں گھروالوں کے طعنے اور بدسلوکی پر لڑکی اور لڑکے نے درخت سے پھندا لگا کر خودکشی کرلی تھی۔

مزید خبریں :