Can't connect right now! retry

دنیا
17 اپریل ، 2019

باربی کیو پارٹی سے جنگل میں آگ، طالب علموں پر ڈھائی کروڑ یورو جرمانہ

طالبعلموں کا کہنا ہے کہ انہیں قربانی کا بکرا بنایا گیا ہے۔ فوٹو: فائل

اٹلی کے جنگلات میں بڑے پیمانے پر آتشزدگی کا باعث بننے والے دو طالبعلموں پر دو کروڑ 82 لاکھ 4 ہزار سے زائد امریکی ڈالرز کا جرمانہ عائد کر دیا گیا۔

دونوں نوجوان طالبعلموں پر گزشتہ برس دسمبر میں اٹلی کے ایک پہاڑی علاقے میں واقع گھر پر باربی کیو کے دوران جنگلات میں آگ لگانے کا الزام ہے۔

طالبعلموں پر جنگلات میں لگنے والی آگ کے باعث ہونے والے نقصان کے حساب سے جرمانہ عائد کیا گیا ہے جو کہ فی کس ایک کروڑ 30 لاکھ یورو بنتا ہے۔

دوسری جانب طالبعلوں کا کہنا ہے کہ جنگلات میں لگنے والی اس آگ کے حوالے سے انہیں قربانی کا بکرا بنایا گیا جس کی وضاحت نہیں کی جا سکتی، اس حادثے کے حقیقی متاثرین ہم ہیں۔

ان کا کہنا ہے کہ ہم نے آگ کے حوالے سے فائر بریگیڈ کو فوری طور پر آگاہ کر دیا تھا اور ہم نے اپنی مدد آپ کے تحت آگ کو بجھانے کی کوشش بھی کی تھی۔

تاہم واقعے کی تحقیقات کرنے والی ٹیم کا کہنا ہے کہ آگ کی وجہ انتہائی خشک موسم میں باربی کیو کے لیے استعمال ہونے والے کوئلے بنے اس لیے اس کے ذمہ دار باربی کیو کرنے والے دو نوجوان اور گھر کا مالک ہے۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM