Can't connect right now! retry

گوگل کا ڈوڈل عظیم افسانہ نگار سعادت حسن منٹو کے نام

۔۔۔۔۔۔۔۔اسکرین گریب

سچائیوں کو افسانوں اور  خاکوں کے قالب میں ڈھال کر امر  ہو جانے والے سعادت حسن منٹو کی آج 180ویں  یوم پیدائش کے موقع پر گوگل اپنا دوڈل تبدیل کر کے انہیں خراجِ عقیدت پیش کر رہا ہے۔

سعادت حسن منٹو نے روایتی اردو افسانے کو نئی جہت دی، اردو ادب میں وہ آج بھی اس مقام پر کھڑے ہیں جہاں ان کے مقابل کوئی نہیں۔

لیجنڈ افسانہ نگار سعادت حسن منٹو  11 مئی 1912 کو بھارت کے ضلع لدھیانہ میں پیدا ہوئے اور ابتدائی تعلیم اپنے گھر میں حاصل کی، 1921 میں ایم او مڈل اسکول میں چوتھی جماعت میں داخلہ لیا۔

پاکستان بننے کے بعد منٹو نے ٹوبہ ٹیک سنگھ، کھول دو، ٹھنڈا گوشت، دھواں اور بو سمیت کئی بہترین افسانے تخلیق کیے جو اردو ادب کے آسمان پر ہمیشہ جگمگاتے رہیں گے۔ 

منٹو نے ڈھائی سو سے زیادہ افسانے اور کہانیاں لکھیں جس میں سے حکومتِ وقت نے ان کے 5 افسانوں کو فحش قرار دے کر انہیں کٹہرے میں کھڑا کیا۔

اردو کے عظیم افسانہ نگار سعادت حسن منٹو کا انتقال 42 برس کی عمر میں 18 جنوری 1955 کو ہوا لیکن وہ آج بھی اپنی تحریروں کے ذریعے دنیائے ادب کے قلب میں بستے  ہیں۔

منٹو نے اپنی قبر کا کتبہ بھی خود لکھا کہ  'یہ سعادت حسن منٹو کی قبر ہے، جو اب بھی سمجھتا ہے کہ اس کا نام لوحِ جہاں پر حرفِ مکرر نہیں'۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM