Can't connect right now! retry

پاکستان
01 جولائی ، 2020

اساتذہ کا مذاق اڑانے پر طلبہ کے گریڈز کم، کیمپس اور ہائی ویز سے کچرا اٹھانے کی سزا

لاہور: معروف نجی یونیورسٹی نے  سوشل میڈیا پر اپنے اساتذہ کا مذاق اڑانے پر طلبہ کو سزائیں سنا دیں۔

فیصل ٹاؤن لاہور کی نجی یونیورسٹی کی ڈسپلنری کمیٹی نے اساتذہ کا مذاق اڑانے والے طالب علموں کی فہرست جاری کر دی۔ 

جیو نیوز کی رپورٹ کے مطابق 13 طالب علموں کو وارننگ دینے کے ساتھ معافی نامہ فیس بک پر لگانے کا حکم دیا گیا جب کہ 10 طالب علموں کے گریڈکم کرکے انہیں روزانہ یونیورسٹی کیمپس کے لان سے کچرا اٹھانے کے ساتھ 2 سیمسٹرز   سے خارج کرنے کی سزا دی گئی ہے۔ 

طلبہ کو کیمپس کھلنے کے بعد مسلسل 4 ہفتوں تک ہائی ویز کی صفائی کا حکم دیا گیا ہے۔

نجی یونیورسٹی کی فہرست کے مطابق 12 گریجویٹ طالب علموں کو بھی معافی نامہ فیس بک پر لگانے کی ہدایت کی گئی ہے اور جو معافی نامہ نہیں لگائے گا ان کو بلیک لسٹ کرکے ڈگری منسوخ کر دی جائے گی۔ 

علاوہ ازیں سائبر بلنگ اور ہراساں کرنے کے قوانین کے حوالے سے بھی کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔

ادھر ایک طالب علم نے سزا کا لیٹر موصول ہوتے ہی معافی نامہ سوشل میڈیا پر اپ لوڈ کر دیا۔

دوسری جانب طلبہ یونیورسٹی انتظامیہ کی جانب سے توہین آمیز سزاؤں پر سراپا احتجاج ہیں اور  ان کا کہنا ہے کہ ہر طالب علم ہلکا پھلکا مذاق کرتا ہے، اسے سائبر بلنگ کے ساتھ جوڑنا غلط ہے۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM