Can't connect right now! retry

کھیل
16 جولائی ، 2020

’ڈریسنگ روم میں شہرت یافتہ قومی کھلاڑیوں کی موجودگی کا بھرپور فائدہ اٹھا رہا ہوں‘

سہیل خان اور شاداب خان اسکواڈ کے سب سے زیادہ شغل لگانے والے کھلاڑی ہیں، سرفراز احمد خود کیپنگ سکھانے لے گئے: روحیل نزیر. فوٹو: فائل

قومی ٹیم کے وکٹ کیپر بیٹسمین روحیل نزیر کا کہنا ہے کہ ڈریسنگ روم میں عالمی شہرت یافتہ کھلاڑیوں کی موجودگی کا بھرپور فائدہ اٹھا رہا ہوں۔

انڈر 19 اور ڈومیسٹک کرکٹ میں عمدہ کارکردگی کی بدولت پاکستان ٹیسٹ کرکٹ ٹیم کے ممکنہ اسکواڈ میں شامل ہونے والے وکٹ کیپر بیٹسمین روحیل نذیر نے انڈر 19 سے پاکستان کرکٹ ٹیم میں شمولیت کو اپنی خوش قسمتی قرار دیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ وہ تجسس کا شکار تھے کہ اسکواڈ میں شامل سینئر کھلاڑی ایک جونیئر کرکٹر سے جانے کیسا برتاؤ کریں گے تاہم جس طرح سینئر کھلاڑیوں نے اسکواڈ میں شمولیت پر ان کا استقبال کیا اس سے اعتماد میں اضافہ ہوا۔

روحیل نذیر نے کہا کہ سہیل خان، امام الحق اور شاداب خان ٹیم میں بہت شغل لگاتے ہیں جب کہ عماد وسیم، بابر اعظم اور شان مسعود بھی حوصلہ افزائی کرنے میں پیش پیش رہتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ یہاں آکر اندازہ ہوا کہ آن فیلڈ پریکٹس کے بعد آف دا فیلڈ کیسے پرسکون رہنا ہے۔

نوجوان وکٹ کیپر نے کہا کہ سرفراز احمد نے انہیں خود اپنے ساتھ مل کر پریکٹس سیشن کرنے کا کہا، سرفراز احمد نے بتایا کہ 2 اور 4 روزہ میچوں میں وکٹ کیپنگ کے دوران کیسے اپنا فوکس برقرار رکھنا ہے۔

روحیل نذیر نے کہا کہ وہ پاکستان کے ڈریسنگ روم میں عالمی شہرت یافتہ کھلاڑیوں کی موجودگی کا بھرپور فائدہ اٹھا رہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ وہ بابر اعظم کے بیٹ دیکھنے کی خواہش رکھتے تھے جو یہاں پوری ہوگئی، بابر اعظم سے پوچھا کہ وہ بیٹ میں کونسا وزن استعمال کرتے ہیں۔

انہوں نے یہاں سینئرز سے سیکھا ہے کہ اپنے کٹ بیگ میں کیا سامان رکھنا ہے۔

روحیل نذیر نے کہا کہ ڈومیسٹک کرکٹ یا انڈر 19 کرکٹ میں نمائندگی کے باوجود انہیں وہ تجربہ نہیں ملا جو باتیں انہوں نے سینئر اسکواڈ میں شامل ہوکر سیکھیں۔

انہوں نے کہا کہ وہ وقت کی نزاکت کو جانتے ہیں اور وہ ان تمام معلومات پر مکمل عمل کرنے کی کوشش کریں گے۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM