Can't connect right now! retry

پاکستان
11 اگست ، 2020

20 سالہ دور میں پہلی بار ادارے کے ساتھ ایسا برتاؤ روا رکھاگیا: نیب

چیئرمین کی منظوری کے بعد لیگی کارکنان کے خلاف کارسرکار میں مداخلت کی ایف آئی آر درج کرانےکا فیصلہ کیا گیا ہے، نیب اعلامیہ— فوٹو: فائل

لاہور: مریم نواز کی نیب میں پیشی کے دوران ہنگامہ آرائی پر لیگی کارکنان اور رہنماؤں کے خلاف مقدمہ درج کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

قومی احتساب بیورو (نیب) نے اپنے اعلامیے میں کہا ہے کہ آج مریم نواز کو ذاتی حیثیت میں موقف لینے کے لیے طلب کیا گیا تھا تاہم ان کی جانب سے نیب لاہور میں پیش ہو کر جواب دینے کے بجائے مسلم لیگ (ن) کے کارکنان کے ذریعے منظم انداز میں غنڈہ گردی کا مظاہرہ کرتے ہوئے پتھراؤ اور بدنظمی کا مظاہرہ کیا گیا۔

نیب اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ نیب کے 20 سالہ دور میں پہلی مرتبہ آئینی و قومی ادارےکے ساتھ اس نوعیت کا برتاؤ روا رکھاگیا، نیب عمارت پرپتھراؤ سے کھڑکیوں کے شیشے توڑے گئے، نیب عملے کو بھی زخمی کیاگیا، ان حالات میں نیب کی جانب سے مریم نوازکی پیشی کوفوری طورپرمنسوخ کیا گیا ہے۔

اعلامیے کے مطابق چیئرمین کی منظوری کے بعد لیگی کارکنان کے خلاف کارسرکار میں مداخلت کی ایف آئی آر درج کرانےکا فیصلہ کیا گیا ہے۔

اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ نیب قومی ادارہ ہے، تمام تر وابستگیاں ملک وقوم کے ساتھ ہیں، نیب کا کسی سیاسی جماعت اور گروہ سےکوئی تعلق نہیں، نیب تمام تراقدامات آئین وقانون کی روشنی میں انجام دیتا ہے۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM