Can't connect right now! retry

پاکستان
13 ستمبر ، 2020

خواتین کیساتھ زیادتی کرنے والوں کی سزا پھانسی ہونی چاہیے: گورنر پنجاب

گورنر پنجاب چوہدری محمد سرور نےکہا ہے کہ خواتین کے ساتھ زیادتی کرنے والوں کی سزا پھانسی ہونی چاہیے۔

لاہور میں پاکستان انسٹیٹیوٹ آف لینگویج آرٹ اینڈ کلچر میں تقریب کے بعد میڈیا سے گفتگو میں چوہدری سرور کا کہنا تھا کہ خاتون زیادتی کیس سے سب کے سر شرم سے جھک گئے ہیں، خواتین سے زیادتی دہشت گردی ہے،  تفتیش ہونی چاہیے کہ موٹروے پر پولیس کیوں تعینات نہیں کی گئی۔

انہوں نے کہا کہ جب تک سزا اور جزا کا نظام نہیں آئےگا معاملات ٹھیک نہیں ہوں گے، خواتین کے ساتھ زیادتی کرنے والوں کی سزا پھانسی ہونی چاہیے۔

ان کا کہنا ہے کہ ہماری تفتیش اورپراسیکیوشن بہت کمزور اوربوسیدہ ہے، ہمارے ہر ادارے میں اصلاحات کی ضرورت ہے۔

گورنر پنجاب کا کہنا تھا کہ موٹروے زیادتی کیس میں ملزمان جلد گرفتار ہوں گے اور ان کو عبرت ناک سزا دیں گے جب کہ سی سی پی او کو الفاظ کا چناؤ صحیح کرنا چاہیے تھا۔

خیال رہے کہ 9 ستمبر کو لاہور کے علاقے گجر پورہ میں موٹر وے پر خاتون کو اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنانے کا واقعہ پیش آیا تھا۔

دو افراد نے موٹر وے پر کھڑی گاڑی کا شیشہ توڑ کر خاتون اور اس کے بچوں کو نکالااور سب کو قریبی جھاڑیوں میں لے گئے اور پھر خاتون کو بچوں کے سامنے زیادتی کا نشانہ بنایا۔

اس حوالے سے سوشل میڈیا پر بھی عوام نے شدید غم و غصے کا اظہار کیا اور واقعے میں ملوث ملزمان کو سرعام پھانسی دینے کا مطالبہ کیا۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM