Can't connect right now! retry

پاکستان
30 نومبر ، 2020

تحفظ ناموس رسالت كے قانون ميں تبدیلی كا تصور بھی ممكن نہیں: طاہر اشرفی

وزیراعظم عمران خان کے نمائندہ خصوصی برائے مذہبی ہم آہنگی علامہ طاہر محمود اشرفی  نے کہا ہے کہ تحفظ ناموس رسالت كا قانون انسانی جانوں كا محافظ ہے، اس قانون ميں تبدیلی كا تصور بھی ممكن نہیں۔

لاہور میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے علامہ طاہر اشرفی کا کہنا تھا کہ تمام آسمانی مذاہب پیار اور محبت کا درس دیتے ہیں، اسلام میں جبر کا کوئی تصور نہیں۔

انہوں نے کہا کہ کورونا بحران میں مسیحی برادری کی خدمات کا اعتراف کرتے ہیں، قانون اور آئین کے مطابق سب کو زندگی گزارنی ہے، قانون کی بالا دستی اورامن قائم رکھنا ریاست کی ذمہ داری ہے، حکومت اور اپوزیشن کیلئے قانون برابر ہے۔

طاہر اشرفی کا جبری مذہب کی تبدیلی پر کہنا تھا کہ یقین دلاتا ہوں کہ 295 سی کا غلط استعمال نہیں ہوگا، ملک میں مذہب کی جبری تبدیلی کی اجازت نہیں دی جاسکتی، اپنی ہوس کیلئے کسی کو اسلام کا نام استعمال کرنے نہیں دیں گے، گارنٹی سے کہہ سکتا ہوں 90 فیصد جبری شادیوں میں ہوس کا عمل دخل ہوتا ہے۔

ان کا کہنا ہے کہ ناموس رسالت كا قانون انسانی جانوں كا محافظ ہے، ناموس رسالت كے قانون ميں تبدیلی كا تصور بھی ممكن نہیں، موجودہ حكومت عقيده ختم نبوت وناموس رسالت کی حفاظت کر رہی ہے۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM