Can't connect right now! retry

اب تک صرف 35 لاکھ پاکستانیوں کو کورونا ویکسین لگائی جاسکی ہے

فوٹو: فائل

پاکستان میں اب تک صرف 35 لاکھ شہریوں کو کورونا ویکسین لگائی جاسکی ہے۔

دوسری جانب کورونا وائرس سے بچاؤکی ویکسین کی کل 14 کھیپیں پاکستان پہنچ چکی ہیں،سرکاری سطح پر سائنو فام، کین سائنو، سائنو ویک اور آسٹرا زینیکا کی پہلی کھیپ پاکستان پہنچی، نجی کمپنیوں کی جانب سے اب تک کین سائنو اور اسپوتنک فائیو نامی ویکسین کی دوکنسائنمنٹس خوراکیں پاکستان کوحاصل ہوئیں ۔

پاکستان نے یکم فروری کو چین سے سائنو فام ویکسین کی پہلی کھیپ کے طور پر 5 لاکھ خوراکیں حاصل کیں،فروری میں ہی سائنو فام ویکسین کی 2 لاکھ 20 ہزار خوراکیں بطور تحفہ موصول ہوئیں ،17 فروری کو پانچ لاکھ مزید ویکسین کی تیسری کھیپ چین سے پہنچی۔

31 مارچ کو کین سائنو بائیو کی پہلی کھیپ پاکستان آئی، جومجموعی طورپرچین سے پاکستان آنےوالی چوتھی کھیپ تھی،31 مارچ کوہی سائنو فام ویکسین کی 5 لاکھ 1 ہزار 6 سو خوراکیں موصول ہوئیں، 2اپریل کو چھٹی کھیپ آئی جو سائنو فام ویکسین کی 4 لاکھ 98 ہزار 4 سو خوراکوں پرمشتمل تھی۔

23 اپریل کو ساتویں کھیپ کے طور سائنو ویک کی پہلی کھیپ میں پانچ لاکھ ویکسین ڈوز موصول ہوئیں،دوست ملک چین نے 24 اپریل کو سائنو فام ویکسین کی 5 لاکھ خوراکیں بطور تحفہ فراہم کیں،25  اپریل کو سائنو فام ویکسین کی دس لاکھ خوراکوں پر مشتمل نویں کھیپ پاکستان پہنچی،29 اور 30 اپریل کو تین طیاروں میں دس لاکھ مزید ویکسین کی ڈوز پاکستان نے وصول کیں ۔

ویکسین کی تیرہویں کھیپ پانچ مئی کی رات آئی اور خام مال کی صورت میں کین سائنو ویکسین کی ایک لاکھ 20 ہزار خوراکیں قومی ادارہ صحت کےحوالے کی گئیں ۔

پاکستان کو کوویکس سے تقریباً 2 ماہ کی تاخیر کے بعد 12 لاکھ چالیس ہزار کے قریب خوراکیں موصول ہوئی ہیں۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM