Can't connect right now! retry

پاکستان
22 جون ، 2021

ہراسانی کی شکار خاتون شوہر کے ہمراہ وزیراعظم آفس پہنچ گئی، عمران خان متعلقہ حکام پر برہم

وزیراعظم عمران خان نے خاتون ہراسانی کیس میں سٹیزن پورٹل پر درج شکایت میں غفلت برتنے پر برہمی کا اظہار کیا ہے۔

وزیراعظم آفس کی جانب سے جاری اعلامیے کے مطابق خاتون نے ہراسگی کے باعث یونیورسٹی سےنوکری چھوڑکرایف آئی اے سے رجوع کیا، ایف آئی اےافسران کے عدم تعاون کی وجہ سے خاتون نے خودکشی کی مبینہ کوشش کی۔

اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ 16 دسمبر 2019 سے 13 جون 2021 تک ایف آئی اے نے شکایت کو مسلسل نظراندازکیا، دوبارشکایت ری اوپن کے باوجود ایف آئی اے نے اپنی ذمہ داری میں کوتاہی برتی۔

اعلامیے کے مطابق خاتون اپنے شوہر کے ہمراہ ایف آئی اے کے خلاف شکایت لے کر وزیراعظم آفس پہنچ گئیں جہاں خاتون کی درخواست پر وزیراعظم آفس نے متعلقہ افسران کےخلاف کارروائی کی یقین دہانی کرائی۔

اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ وزیراعظم ڈیلیوری یونٹ نے ڈی جی ایف آئی اے کو مراسلہ جاری کردیا، جس میں ہدایت کی گئی ہے کہ معاملےکی تحقیقات کرواکرمتعلقہ افسران کےخلاف کاروائی کی جائے۔

وزیراعظم نے سٹیزن پورٹل پر درج شکایت میں غفلت برتنے پر برہمی کا اظہار کیا اور ڈی جی ایف آئی اےکو شفاف انکوائری کیلئے متعلقہ افسران کو معطل کرنےکی ہدایت کی۔

وزیراعظم نے ہدایت جاری کی کہ خاتون کو جلد ازجلد ریلیف فراہم کیا جائے۔

وزیراعظم کا کہنا تھاکہ کسی بھی شہری کی شکایت پرغفلت برتنے کی اجازت نہیں جانے دی جائے گی۔

اعلامیے کے مطابق انکوائری رپورٹ وزیراعظم کو 20 جولائی 2021 کو پیش کی جائے گی۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM