Can't connect right now! retry

کھیل
22 نومبر ، 2021

پاک بنگلادیش تیسرے ٹی ٹوئنٹی میچ کی آخری گیند پر کیا ڈرامہ ہوا؟

پاکستان نے بنگلادیش کو آخری ٹی ٹوئنٹی میچ میں سنسنی خیز مقابلے کےبعد شکست دیکر 3 میچز پر مشتمل سیریز 0-3 سے اپنے نام کرلی ۔

بنگلادیش نے پہلے بیٹنگ کرتے ہوئے مقررہ 20 اوورز میں 7 وکٹوں کے نقصان پر 124 رنز بنائے ۔

125 رنز کے جواب میں پاکستان ٹیم نے سست  بیٹنگ کا مظاہرہ کیا اور میچ کو آخری اوور میں لے گئے۔

پاکستان ٹیم کو آخری اوور میں 8 رنز درکار تھے لیکن بنگلادیش کے محموداللہ نے اوور کی ابتدائی 3 گیندوں پر 2  وکٹیں لے کر پاکستان کو مشکل میں ڈال دیا۔

آخری اوور کی چوتھی گیند پر افتخار احمد نے چھکا مارا لیکن پانچویں گیند پر وہ بھی آؤٹ ہوگئے ۔

اب پاکستان کو میچ جیتنے کیلئے آخری گیند پر 2 رنز درکار تھے اور کریز پر محمد نواز  محمود اللہ کا سامنا کررہے تھے ۔

محمود اللہ نے آخری گیند  امپائر کے پیچھے سے کروائی تو نواز  نے گیند کو چھوڑا اور گیند وکٹ پر لگ گئی جس کے بعد بنگلادیش نے آؤٹ کی اپیل کی۔

فیلڈ پر موجود امپائر تنویز احمد  نے  گیند کو ڈیڈ بال قرار دیا جس کے بعد نواز نے آخری گیند پر چوکا مار کر پاکستان کو کامیابی دلوائی ۔

میچ کے بعد بنگلادیش کے کپتان محمود اللہ کا کہنا تھا کہ' محمدنواز آخری لمحات میں پیچھے ہٹے ، میں نے امپائر سے پوچھا کیا یہ صحیح گیند نہیں تھی'۔

محمود اللہ نے کہا کہ  امپائرنے جو فیصلہ کیا ہم اس کا احترام کرتے ہیں ۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM