پاکستان
28 جون ، 2022

آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ سے 12 رکنی برطانوی سکھ فوجی وفد کی ملاقات

وفد نے ضلع اورکزئی کا بھی دورہ کیا، سمانہ قلعہ، لاک ہارٹ فورٹ اور سارہ گڑھی یادگار کا مشاہدہ کیا— فوٹو: آئی ایس پی آر
وفد نے ضلع اورکزئی کا بھی دورہ کیا، سمانہ قلعہ، لاک ہارٹ فورٹ اور سارہ گڑھی یادگار کا مشاہدہ کیا— فوٹو: آئی ایس پی آر

آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ سے 12  رکنی برطانوی سکھ فوجی وفد نے جنرل ہیڈ کوارٹرز (جی ایچ کیو) راولپنڈی میں ملاقات کی۔

وفد کی قیادت ڈپٹی کمانڈر فیلڈ آرمی میجر جنرل سیلیا جے ہاروی نے کی، دوران ملاقات آرمی چیف کا کہنا تھا کہ پاکستان تمام مذاہب کا احترام کرتا ہے، ملک میں مذہبی سیاحت کے فروغ کی ضرورت کو بھی تسلیم کرتا ہے۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے مطابق آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے مزید کہا کہ کرتار  پور  راہداری پاکستان کی مذہبی آزادی اور ہم آہنگی کیلئے غیر متزلزل عزم کا عکاس ہے۔

وفد نے لاہور کا بھی دورہ کیا اور  واہگہ بارڈر  پر  پرچم اتارنے کی تقریب دیکھی، وفد نے قلعہ لاہور،  علامہ اقبال کے مزار اور بادشاہی مسجد کا دورہ کیا، برطانوی سکھ فوجیوں نے ملک میں کئی مذہبی مقامات کا دورہ کیا جن میں دربار حضرت میاں میر، حویلی نونہال سنگھ، گوردوارا جنم استھان گرو رام داس، سمادھی رنجیت سنگھ، گوردوارا ڈیرہ صاحب، کرتار پور راہداری ، ننکانہ صاحب اور ڈیرہ پنجہ صاحب شامل ہیں۔

وفد نے ضلع اورکزئی کا بھی دورہ کیا، سمانہ قلعہ، لاک ہارٹ فورٹ اور سارہ گڑھی یادگار کا مشاہدہ کیا، وفد نے سارہ گڑھی یادگار پر پھولوں کی چادر چڑھائی، وفد نے قبائلی اضلاع میں امن کیلئے پاکستان کی مسلح افواج کی کوششوں کو سراہا۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM