انٹرٹینمنٹ
21 ستمبر ، 2022

راجو شری واستو کا رکشہ ڈرائیور سے کامیڈی کنگ بننے تک کا سفر

راجو نے اپنی کامیڈی کا آغاز اداکار امیتابھ بچن کی نقل اتار کر کیا تھا جس پر انہیں 50 روپے ملے تھے۔ فوٹو فائل
راجو نے اپنی کامیڈی کا آغاز اداکار امیتابھ بچن کی نقل اتار کر کیا تھا جس پر انہیں 50 روپے ملے تھے۔ فوٹو فائل

اداس چہروں پر  ہنسنی بکھیرنے والے کامیڈین راجو شری واستو 58 سال کی عمر میں اپنے چاہنے والوں کو غمگین کر گئے۔

راجو  شری واستو نے بطور کامیڈین کام کا آغاز کیسے کیا؟ ان کی زندگی پر ایک روشنی ڈالتے ہیں۔

جتنا وہ ہسنتے مسکراتے اور لوگوں کو قہقہے لگانے پر مجبور کرتے تھے ان کی زندگی بھی اتنی ہی مشکل رہی، راجو شری واستو نے رکشہ چلا کر  پیسے کمائے لیکن محنت اور لگن نے راجو کو کامیڈی کا کنگ بنا دیا۔

فائل فوٹو
فائل فوٹو

راجو 25 دسمبر 1963 کو پیدا ہوئے اور ان کا نام ستیہ پرکاش سری واستو تھا، راجو 80 کی دہائی میں ممبئی شہر میں بڑے خواب لے کر آئے لیکن فلموں میں اداکاری اور کامیڈی سے قبل راجو نے رکشہ چلا کر اپنا گزر بسر کیا۔ 

راجو نے اپنی کامیڈی کا آغاز  اداکار امیتابھ بچن کی نقل اتار کر کیا تھا جس پر انہیں 50 روپے ملے تھے، اس کے بعد انہیں 1988 میں فلم 'تیزاب' میں رول ملا، یوں راجو نے  فلم انڈسٹری میں اپنی پہچان بنا لی، 1989 میں 'میں نے پیار کیا ' اور 1993 میں فلم 'بازی گر' میں بھی اداکاری کے جوہر دکھائے۔

فائل فوٹو
فائل فوٹو

2005 میں انہیں ایک کامیڈین کے طور پر شناخت ملی، اس دور کا مشہور کامیڈی شو 'دی گریٹ انڈیا لافٹر چیلنج' میں راجو نے کامیڈی کا ٹیلنٹ دکھا کر دیکھنے والوں کے دلوں میں گھر کرلیا، اس کے علاوہ راجو سیاست سے بھی وابستہ  رہے۔

بھارتی میڈیا رپورٹس کے مطابق راجو شری واستو کو  10 اگست کو دل کا دورہ پڑنے کے سبب اسپتال میں داخل کیا گیا تھا لیکن وہ جانبر نہ ہو سکے اور آج صبح انتقال کر گئے۔ 

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM