انٹرٹینمنٹ
21 ستمبر ، 2022

فیروز خان کی اہلیہ نے جسمانی تشدد کا الزام لگاتے ہوئے اداکار سے علیحدگی کی تصدیق کردی

فوٹو: فیروز اور علیزے فائل
فوٹو: فیروز اور علیزے فائل

پاکستانی اداکار فیروز خان کی اہلیہ علیزا  نے شوہر سے علیحدگی کی تصدیق کردی۔

سوشل میڈیا پر بیان جاری کرتے ہوئے علیزا نے لکھاکہ 'ہماری چار سال کی شادی الجھنوں کا شکار رہی۔ اس عرصے کے دوران میں نے شوہر کی جانب سے مسلسل جسمانی اور نفسیاتی تشدد ، بے وفائی اور  بلیک میلنگ کا سامنا کیا'۔

تاہم سوچ بچارکے بعد میں اس نتیجے پر پہنچی ہوں کہ میں اپنی پوری زندگی اس خوفناک انداز میں نہیں گزار سکتی۔

انہوں نے مزید لکھا کہ میں نہیں چاہتی کہ میرے بچے ایسے تشدد زدہ ماحول میں پرورش پائیں۔

واضح رہے کہ آج ہی کراچی میں فیملی جج شرقی کی عدالت میں اداکار فیروز خان کی جانب سے بچوں سے ملاقات کرانے سے متعلق کیس کی سماعت ہوئی۔

درخواست گزار فیروز خان اپنے وکیل کے ہمراہ پیش ہوئے اور ایس ایچ او گلستان جوہر اور علیزا فاطمہ اپنے بچوں کے ہمراہ عدالت میں پیش ہوئیں۔

دوران سماعت فیروز خان کی سابقہ اہلیہ نے فیروز خان پر تشدد کا الزام عائدکیا، ان کا کہنا تھا فیروز خان ان پر تشدد کرتا تھا،آئے روز چیخنے چلانے کی آوازیں سن کر محلے والے جمع ہوجاتے تھے، ایک ماہ قبل زور دینے پربیٹےسلطان کوڈیفنس کے اسکول میں داخلہ دلوایا تھا،میں اب گلستاں جوہر میں رہتی ہوں کیسے بچے کو روز اسکول لے جاؤں۔

فیروز خان نے سابقہ اہلیہ کے تمام الزامات کو مسترد کردیا،ان کا کہنا تھا وہ بچوں کا خرچ ادا کر رہے ہیں، بچے کو اسکول میں داخلہ دلوایا مگر اسکول نہیں بھیج رہی ہیں، بچوں سے ملنا ان کاحق ہے اور کوئی یہ حق چھین نہیں سکتا۔

بعد ازاں عدالت کی جانب سے تحریری حکم نامہ جاری کیاگیا جس میں کہا گیا ہے کہ علیزا فاطمہ کے وکیل کو درخواست کی نقول اور دیگر دستاویزات فراہم کردی گئیں ہیں ایس ایچ او کے ذریعے بچوں کو عدالت میں پیش کردیا گیا ہے اور عدالت میں بچوں کی باپ سے ملاقات بھی ہو گئی ہے لہٰذا درخواست گزار کی جانب سے ایس ایچ او کے ذریعے بچوں پیش کرنے کی درخواست غیر مؤثر ہوچکی ہے۔

 عدالت نے ایس ایچ او کے ذریعے بچوں کو پیش کرنے کی درخواست نمٹادی اور کیس کی مزید سماعت یکم اکتوبر تک ملتوی کردی۔

خیال رہےکہ گزشتہ دنوں معروف پاکستانی اداکار فیروز خان اور ان کی اہلیہ علیزہ میں علیحدگی کی خبریں ایک بار پھر سوشل میڈیا پر زیر گردش تھیں۔

فیروز اور علیزا نے انسٹا گرام پر ایک دوسرے کو ان فالو کر دیا تھا اور دونوں نے اپنے سوشل میڈیا اکاؤنٹس سے ایک دوسرے کی تصاویر اور ویڈیوز بھی ہٹا دی تھیں۔

یاد رہے کہ فیروز اور علیزا نے 2018 میں شادی کی تھی، دونوں کے دو بچے ایک بیٹا اور بیٹی بھی ہیں۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM