دنیا
28 نومبر ، 2022

کلاس میں مسلم طالب علم کو دہشتگرد کہنے والا پروفیسر معطل

کرناٹک کی یونیورسٹی میں پروفیسر نے بھری کلاس میں مسلمان طالب علم کو دہشتگرد کہا تھا— فوٹو: اسکرین گریب
کرناٹک کی یونیورسٹی میں پروفیسر نے بھری کلاس میں مسلمان طالب علم کو دہشتگرد کہا تھا— فوٹو: اسکرین گریب

بھارت میں مسلمان طالب علم سے تعصب اور نفرت کا اظہارکرنے والے پروفیسرکو معطل کردیا گیا۔

کرناٹک کی یونیورسٹی میں پروفیسر نے بھری کلاس میں مسلمان طالب علم کو دہشتگرد کہا تھا جس پر کلاس میں موجود ایک طالب علم  استاد کو سبق پڑھانے پر مجبور ہوگیا تھا۔

طالب علم نے کہا کہ آپ کو کسی کے مذہب کا مذاق اڑانےکا حق نہیں، بھری کلاس میں دہشتگرد کہہ کر مخاطب کرنےکا کیا مقصد ہے۔

طالبعلم کے ردعمل پر پروفیسر معذرت کرنے پر مجبور ہوگئے تھے، کلاس کے دیگر طالب علم بھی خاموش بیٹھے رہے یا ہنستے رہے۔

یہ واقعہ بنگلور کی منی پال انسٹیٹیوٹ آف ٹیکنالوجی میں پیش آیا۔ اس واقعے کی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہوگئی تھی جس کے بعد پروفیسر  کیخلاف کارروائی عمل میں لائی گئی۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM