Election 2024 Election 2024

دنیا
Time 08 دسمبر ، 2023

حزب اللہ کے میزائل حملے، اسرائیلی وزیراعظم نے بیروت کو ’غزہ‘ بنانے کی دھمکی دیدی

اسرائیل کے وحشیانہ حملوں میں شہید فلسطینیوں کے تعداد 17 ہزار سے تجاوز کر چکی ہے جبکہ شہدا میں نصف سے زائد تعداد بچوں اور خواتین پر مشتمل ہے— فوٹو: الجزیرہ
اسرائیل کے وحشیانہ حملوں میں شہید فلسطینیوں کے تعداد 17 ہزار سے تجاوز کر چکی ہے جبکہ شہدا میں نصف سے زائد تعداد بچوں اور خواتین پر مشتمل ہے— فوٹو: الجزیرہ

لبنان سے اسرائیل پر حزب اللہ کے میزائل حملے میں ایک اسرائیلی ہلاک ہوگیا، حزب اللہ حملے پر اسرائیلی وزیراعظم نے بیروت کو غزہ بنانے کی دھمکی دے دی۔

لبنانی مزاحمتی تنظیم حزب اللہ نے 24گزشتہ گھنٹوں میں اسرائیل کے 13 فوجی اہداف کو نشانہ بنایا جس میں  دو اسرائیلی فوجی مارے گئے۔

لبنان کا کہنا ہے اسرائیلی فوج نے جنوبی سرحدی علاقے میں وائٹ فاسفورس کا حملہ کیا ہے۔

غزہ میں جاری  جارحانہ اسرائیلی کارروائیوں کے دوران مختلف رہائشی علاقوں پر اسرائیلی بمباری میں گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 350 سے زائد فلسطینی شہید ہوچکے ہیں۔

گزشتہ دو ماہ کے دوران اسرائیل کے وحشیانہ حملوں میں  شہید فلسطینیوں کے تعداد 17 ہزار سے تجاوز کر چکی ہے جبکہ شہدا میں نصف سے زائد تعداد بچوں اور خواتین پر مشتمل ہے۔

دوسری جانب اسرائیلی فوج کے خلاف فلسطینی مزاحمتی فورسز کی شدید مزاحمت بھی جاری ہے، حماس کے جنگجوؤں نے جوابی کارروائیاں کرتے ہوئے اسرائیلی فوج کے کمانڈ اینڈ کنٹرول سسٹم، ٹینکوں، فوجیوں پر میزائلوں اور مارٹر گولوں سے حملے کردیے، تین روز میں 135 اسرائیلی فوجی گاڑیاں تباہ کر دی گئیں۔

اسرائیلی فوج نے زمینی آپریشن میں حماس سے جھڑپوں میں 87 اسرائیلی فوجیوں کی ہلاکت کا بھی اعتراف کر لیا۔

ادھر امریکا نے یرغمالیوں کی تلاش میں اسرائیل کی مدد کیلئے غزہ پر دوبارہ امریکی ڈرون پروازیں شروع کرنے کا اعلان کردیاہے۔

اس کے علاوہ دنیا کے مختلف ممالک کی جانب سے بھی غزہ میں فلسطینیوں کی نسلی کشی اور غزہ جنگ میں اسرائیل کی مدد کیلئے جنگی ساز و سامان اور اسلحے کی امداد بھیجنے سے متعلق اسرائیلی وزارت دفاع نے تصدیق کردی ہے کہ 7 اکتوبر سے اب تک 10 ہزار ٹن سے زائد فوجی ساز و سامان سے لدے 200 کارگو طیارے متعدد ممالک سے اسرائیل بھیجے گئے ہیں۔

خیال رہے کہ غزہ میں شدید بمباری کے علاوہ فلسطینی شہریوں کے ساتھ اسرائیلی فوج کے بدترین سلوک کی ویڈیوز اور تصاویر بھی سوشل میڈیا پر وائرل ہو رہی ہیں۔

وائرل تصاویر اور ویڈیوز میں دیکھا جاسکتا ہے کہ زیر حراست درجنوں فلسطینیوں کو شدید سردی میں کپڑے اتار کر کھلے مقامات پر بٹھایا گیا، زیر حراست افراد میں بزرگ اور نوجوانوں کے علاوہ بچے بھی شامل ہیں، حراست میں لیے گئے فلسطینیوں کا تعلق غزہ کے مختلف علاقوں سے ہے۔

فلسطینی میڈیا کے مطابق غزہ میں اب تک 17 ہزار 177 افراد شہید اور 46 ہزار زخمی ہوچکے ہیں،7 ہزار 700 فلسطینی ملبے تلے دبے ہیں، غزہ سٹی میں 52 ہزار مکانات مکمل اور ڈھائی لاکھ سے زائد مکانات جزوی تباہ ہوئے ہیں۔

7 اکتوبر سے اب تک اسرائیلی حملوں میں 194 مساجد اور تین چرچ تباہ ہوئے ہیں، ادھر مقبوضہ مغربی کنارے میں بھی اسرائیلی کی جارحیت کا سلسلہ جاری ہے۔

مزید خبریں :