Can't connect right now! retry

پاکستان
02 دسمبر ، 2019

سابق ڈی جی ایف آئی اے بشیر میمن مستعفی ہوگئے

 ریٹائرمنٹ کے قریب پوسٹنگ نہ دینے کا مطلب ناراضی کا اظہار ہے اور اخلاقیات کا تقاضا ہے کہ نوکری سے مستعفی ہوجاؤں: بشیر میمن— فوٹو:فائل  

وفاقی تحقیقاتی ایجنسی (ایف آئی اے) کے سابق ڈائریکٹر جنرل بشیر میمن نے سروس سے استعفیٰ دے دیا۔ 

گزشتہ دنوں وفاقی حکومت نے سپریم کورٹ کے احکامات کے باوجود ایف آئی اے کے ڈائریکٹر جنرل بشیر میمن کو عہدے سے ہٹاکر پاناما کیس میں نواز شریف کیخلاف تحقیقات کرنے والی ٹیم (جے آئی ٹی) کے سربراہ واجد ضیاء کو نیا ڈی جی ایف آئی اے تعینات کیا۔

ذرائع نے دعویٰ کیا ہے کہ بشیر میمن کو وفاقی وزیر برائے بحری امور علی زیدی کی شکایت پر ہٹایا گیا۔ تاہم اب اس تمام تر صورتحال میں سابق ڈی جی ایف آئی اے بشیر میمن نے ملازمت سے استعفیٰ دے دیا ہے۔ 

انہوں نے اپنے استعفے میں لکھا کہ ریٹائرمنٹ کے قریب پوسٹنگ نہ دینے کا مطلب ناراضی کا اظہار ہے اور اخلاقیات کا تقاضا ہے کہ نوکری سے مستعفی ہوجاؤں۔

خیال رہے کہ سپریم کورٹ نے اصغرخان کیس میں بشیر میمن کو تحقیقاتی افسر مقرر کر رکھا ہے اور تحقیقات مکمل ہونے تک بشیر میمن کو عہدے پر رکھنےکا حکم دیا تھا۔

سوشل میڈیا پر زیر گردش بشیر میمن کا استعفیٰ — فوٹو: سوشل میڈیا

اس سے قبل رواں سال ستمبر میں وفاقی وزارت داخلہ نے بشیر میمن کو جبری رخصت پر بھیج دیا تھا اور ان کی جگہ ڈاکٹر مجیب الرحمان خان کو قائم مقام ڈی جی کا چارج دیا گیا تھا۔  

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM