Can't connect right now! retry

پاکستان
27 مارچ ، 2020

بلوچستان میں علمائے کرام سے نمازوں کے دوران لوگوں کی تعداد محدود رکھنے کی درخواست

بلوچستان حکومت نےکورونا وائرس کے ممکنہ پھیلاؤ کو روکنے کے لیے علمائے کرام کو جمعہ نماز اور مساجد میں باجماعت نماز ادا کرنے کے دوران لوگوں کی تعداد کو محدود رکھنے کی درخواست کر دی۔

ترجمان بلوچستان حکومت لیاقت شاہوانی نے اپنے ویڈیو پیغام میں کہا ہے کہ بلوچستان حکومت صوبے میں لاک ڈاؤن کے فیصلے پر مکمل عملدرآمد کرا رہی ہے اور صوبے میں تمام اجتماعات پر پابندی عائد ہے ۔

انہوں نے صوبے کے علمائے کرام سے درخواست کی ہے کہ وہ جمعہ نماز اور مساجد میں باجماعت نماز ادا کرنے کے دوران لوگوں کی تعداد کو محدود سے محدود تر کریں۔

لیاقت شاہوانی نے مزید کہا کہ کچھ مکتبہ فکر سے تعلق رکھنے والے علمائےکرام نے یقین دہانی کرائی ہے کہ مساجد میں جمعہ نماز و باجماعت نماز ادا کرنے کے دوران لوگوں کی شرکت کو محدود سے محدود تر کیا جائے گا۔

خیال رہے کہ گزشتہ روز وفاقی وزیر برائے مذہبی امور پیر نور الحق قادری نے وفاقی وزیر برائے منصوبہ بندی اسد عمر کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا تھا کہ حکومت نے کورونا وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے کے لیے باجماعت نماز اور نماز جمعہ کے اجتماعات کو محدود کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

حکومت سندھ نے بھی آج سے نماز جمعہ اور باجماعت نماز کے دوران 3 سے 5 افراد کو اجازت دینے کا اعلان کیا ہے۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM