Can't connect right now! retry

سماجی دوری: ایسا ریسٹورینٹ جہاں ایک دن میں ایک شخص کھانا کھائے گا

فوٹو:فائل

کورونا وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے کے لیے دنیا بھر میں لاک ڈاؤن اور جزوی کرفیو نافذ  ہے۔

لاک ڈاؤن کی وجہ سے دنیا بھر میں جہاں دفاتر، تعلیمی ادارے اور تمام تر دکانیں بند ہیں تو وہیں ریسٹورینٹ بھی بند ہیں اور لوگ باہر جا کر کھانا کھانے سے محروم ہیں۔

متعدد ممالک میں سماجی دوری اختیار کرتے ہوئے تمام تر حفاظتی اقدامات کے ساتھ ریسٹورینٹس کھول دیے گئے ہیں۔

لیکن سوئیڈن میں سماجی دوری پر خاص عمل کرتے ہوئے جلد ایک ایسا ریسٹورینٹ کھولا جا رہا ہے جس میں ایک دن میں ایک ہی شخص کھانا کھا سکتا ہے اور وہاں بیٹھنے کے لیے صرف ایک ہی ٹیبل لگی ہوئی ہے۔

یہی نہیں بلکہ ریسٹورینٹ میں کھانا پیش کرنے کے لیے ایک رسی کی مدد سے ٹوکری کے ذریعے کھانا ٹیبل تک پیش کیا جائے گا۔

سوئیڈن میں سماجی دوری پر عمل کرنے والا 'ٹیبل فار ون' نامی ریسٹورینٹ 10 مئی سے کھلے گا جو کہ یکم اگست تک صارفین کو اپنی خدمات فراہم کرے گا۔

ہوٹل کے سربراہ کا کہنا ہے کہ روزانہ ایک شخص ہی ایک ٹیبل پر بیٹھ کر کھانا کھا سکے گا اور اس کے استعمال شدہ برتن دو مرتبہ دھلیں گے جب کہ ٹیبل کو بھی سینیٹائز کیا جائے گا۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM