Can't connect right now! retry

دنیا
20 جنوری ، 2021

جوبائیڈن کی تقریب حلف برداری پر تعینات ہزاروں میں سے 12 اہلکاروں کو اچانک ہٹالیا گیا

فوٹو: رائٹرز

امریکی صدر کی حلف برداری کی تقریب کی سکیورٹی پر تعینات ہزاروں اہلکاروں میں سے 12 اہلکاروں کو اچانک ہٹادیا گیا۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق امریکی نیشنل گارڈ کے ان 12 اہلکاروں کے بائیں بازو کے شدت پسند گروپ کے ساتھ تعلقات پائے گئے اور ان اہلکاروں نے آن لائن متنازع پوسٹیں بھی کیں جس بناء پر انہیں فوری طور پر ذمہ داریوں سے ہٹادیا گیا ہے۔

میڈیا رپورٹس میں کہا گیا ہےکہ اس تمام تر صورتحال میں امریکی صدر جوبائیڈن کو کوئی خطرہ نہیں ہے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق امریکی حکام، سینئر انٹیلی جنس اور فوجی حکام نے اس معاملے پر بریف کیا جب کہ اس سلسلے میں یہ نہیں بتایا گیا کہ سکیورٹی سے ہٹائے گئے اہلکاروں کا کس گروپ سے تعلق تھا یا انہوں نے اس گروپ کے لیے کیا کام کیا۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق اعلیٰ عہدیداران کا کہنا ہےکہ اس حوالے سے حکام کو یہ اختیار نہیں کہ وہ عوامی سطح پر یہ بات کرسکیں یا نام ظاہر کیے بغیر بھی مشروط طور پر اس بارے میں بتاسکیں۔

میڈیا رپورٹس میں کہا گیا ہے کہ سکیورٹی اہلکاروں کو ایک ایسے وقت میں ہٹایا گیا ہے جب ایف بی آئی نے تقریب حلف برداری کے لیے جانچ پڑتال کرکے 25 ہزار تجربہ کار اہلکاروں کو مخصوص علاقے میں تعینات کیا۔

واضح رہے کہ نئے امریکی صدر کی تقریب حلف برداری پاکستانی وقت کے مطابق آج شب ساڑھے 9 بجے ہوگی جس کے لیے جوبائیڈن اور کمالا ہیرس واشنگٹن پہنچ چکے ہیں اور تمام تیاریاں بھی مکمل کرلی گئی ہیں۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM