پاکستان
28 جولائی ، 2022

فریقین کی رضا مندی، عدالت نے عامر لیاقت کے پوسٹ مارٹم کیخلاف درخواست نمٹادی

درخواست گزاروں کو جوڈیشل مجسٹریٹ کے فیصلے کے خلاف سیشن عدالت میں اپیل کرنا چاہیے: سندھ ہائیکورٹ/فائل فوٹو
درخواست گزاروں کو جوڈیشل مجسٹریٹ کے فیصلے کے خلاف سیشن عدالت میں اپیل کرنا چاہیے: سندھ ہائیکورٹ/فائل فوٹو

کراچی: سندھ ہائیکورٹ نے عامر لیاقت کے پوسٹ مارٹم کے فیصلے کے خلاف درخواست نمٹادی۔

عامر لیاقت کے بیٹے اور بیٹی نے جوڈیشل مجسٹریٹ شرقی کی جانب سے پوسٹ مارٹم کی اجازت کو ہائیکورٹ میں چیلنج کیا تھا جس میں پوسٹ مارٹم کا فیصلہ کالعدم قرار  دینے کی استدعا کی گئی تھی۔

پولیس نے عدالت میں مؤقف اختیار  کیا کہ عامرلیاقت کی موت وجہ جاننے کے لیے انکوائری کرانےکی درخواست مجسٹریٹ کے پاس دائر کی تھی، 10 جون کوایڈیشنل پولیس سرجن نےعامر لیاقت کی لاش کا بیرونی جائزہ لیا تھا، پولیس سرجن کے مطابق باڈی کے بیرونی معائنے سے موت کےبارے میں کچھ نہیں کہاجاسکتا۔

سندھ ہائیکورٹ کے جسٹس اقبال کلہوڑو نے  عامرلیاقت حسین کی میت کا پوسٹ مارٹم نہ کیے جانے کے خلاف درخواست پر سماعت کی جس میں عدالت  نے کہا کہ درخواست گزاروں کو جوڈیشل مجسٹریٹ کے فیصلے کے خلاف سیشن عدالت میں اپیل کرنا چاہیے، اس معاملے پر براہ راست ہائیکورٹ سے رجوع نہیں کیا جاسکتا۔

بعد ازاں عدالت نے فریقین کی رضا مندی سے پوسٹ مارٹم کےفیصلے کے خلاف  درخواست نمٹادی۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM