کاروبار
20 نومبر ، 2022

حکومت نے شوگر ملز مالکان کے آگے گھٹنے ٹیک دیے، چینی کی قیمت بڑھنے کا امکان

پہلے مرحلے میں حکومت 5 لاکھ ٹن چینی برآمد کرنے کی اجازت دینے پر آمادہ ہو گئی ہے: ذرائع۔ فوٹو فائل
 پہلے مرحلے میں حکومت 5 لاکھ ٹن چینی برآمد کرنے کی اجازت دینے پر آمادہ ہو گئی ہے: ذرائع۔ فوٹو فائل

حکومت نے شوگر ملز مالکان کے آگے گھٹنے ٹیکتے ہوئے شوگر ملز مالکان کو بروقت کرشنگ کی ہدایت کرنے اور تیار چینی مقامی مارکیٹ میں فروخت کرنے کی ہدایت دینے کے بجائے چینی برآمد کرنے کا فیصلہ کر لیا۔

ذرائع کے مطابق وزارت پیداوار اور شوگر ملز مالکان کے درمیان چینی کی برآمد سے متعلق معاملات طے پا گئے ہیں۔

شوگر ملز ایسوسی ایشن کے ذرائع کا کہنا ہے کہ پہلے مرحلے میں حکومت 5 لاکھ ٹن چینی برآمد کرنے کی اجازت دینے پر آمادہ ہو گئی ہے، شوگر ملز مقامی چینی کی قیمت میں فوری اضافہ نہیں کریں گی تاہم نیا اسٹاک آنے پر چینی کی قیمت بڑھ سکتی ہے۔

ذرائع کا بتانا ہے کہ گنےکی کرشنگ بھی اسی ماہ شروع کر دی جائے گی، سرپلس چینی کی برآمد سے ملک کو ایک ارب ڈالر زرمبادلہ ملے گا اور شوگر ملز مالکان اسی ہفتے وزیراعظم شہباز شریف سے ملاقات کریں گے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ چینی اگر مقامی مارکیٹ میں فروخت کی جاتی تو عوام کو چینی سستے داموں مل سکتی تھی۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM