Can't connect right now! retry

پاکستان
20 جولائی ، 2019

سینیٹ کا اجلاس 23 جولائی کو طلب


اسلام آباد: سینیٹ کا اجلاس 23 جولائی کو طلب کر لیا گیا۔

چیئرمین سینٹ صادق سنجرانی نے اپوزیشن کی ریکوزیشن پر ایوان بالا کا اجلاس طلب کیا ہے۔

اپوزیشن نے چند روز قبل چیئرمین صادق سنجرانی کو ہٹانے کے لیے سینیٹ کا اجلاس بلانے کے لیے ریکوزیش جمع کرائی تھی جس پر سینیٹ سیکریٹریٹ نے اعتراض لگا کر اپوزیشن سے اس پر وضاحت طلب کی تھی۔

سینیٹر شیری رحمان کا اس حوالے سے کہنا تھا کہ ریکوزیشن جمع ہونے کے 4 دن بعد اعتراض لگانے کا مقصد کیا ہے؟ اعتراضات تاخیری حربہ ہیں اور سینیٹ کا اجلاس بلانے میں تاخیر غیر آئینی ہو گی۔

چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی کی جانب سے اپوزیشن جماعتوں کو انہیں ہٹانے کے لیے جمع کرائی گئی قرارداد واپس لینے کا مطالبہ بھی کیا گیا تھا۔

اپوزیشن کی جانب سے چیئرمین سینیٹ کے لیے نامزد متفقہ امیدوار سینیٹر حاصل بزنجو نے ریکوزیشن پر اعتراض لگائے جانے کے عمل کو حکومت کا تاخیری حربہ قرار دیتے ہوئے کہا کہ ہمارے پاس چیئرمین سینیٹ کو ہٹانے کے لیے نمبر پورے ہیں۔


Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM