Can't connect right now! retry

کاروبار
12 جنوری ، 2020

گڈز ٹرانسپورٹرز کی حمایت، پیر سے اندرون ملک بس سروس معطل کرنے کا اعلان

انٹر سٹی بس اونرز نے کراچی میں گڈز ٹرانسپورٹرز کی ہڑتال کی حمایت کرتے ہوئے پیر سے اندرون ملک بس سروس معطل رکھنے کا اعلان کیا ہے۔

کراچی میں گڈز ٹرانسپورٹرز کی ایکسل لوڈ کنٹرول پر عملدرآمد، روٹ پرمٹ اور ٹوکن فیس میں اضافہ واپس لینے سمیت 10 نکاتی مطالبات کے حق میں ایک ہفتے سے ہڑتال جاری ہے۔ 

 ترجمان گورنر سندھ کے مطابق گورنر سندھ عمران اسماعیل سے گڈز ٹرانسپورٹرز کے وفد کی ملاقات ہوئی جس میں وفاقی وزیر محمد میاں سومرو اور  مشیر برائے صنعت و تجارت عبد الرزاق داؤد بھی شریک تھے۔

ملاقات میں گڈز ٹرانسپورٹرز کے وفد نے حکومتی ٹیم کو اپنے مطالبات پیش کیے، ایکسل لوڈ رجیم، پارکنگ اور روٹ پرمٹ کے مسائل سے آگاہ کیا۔ 

اس موقع پر گورنر سندھ عمران اسماعیل کا کہنا تھا کہ مذاکرات میں مثبت پیشرفت ہوئی ہے۔

دوسری طرف گڈز ٹرانسپورٹرز کے ترجمان نے حکومت سے مذاکرات کو ناکام قرار دیتے ہوئے کہا کہ حکومت سے پہلے ہی نکتے پر مذاکرات ناکام ہو گئے تھے۔

 ترجمان گڈز ٹرانسپورٹرز امداد نقوی کا کہنا تھا کہ مذکرات میں ایکسل لوڈ کی کمی پر صنعت کاروں کے شدید تحفظات کا ذکر کیا، اس کے علاوہ مذاکرات میں دیگر امور زیر بحث ہی نہ آسکے۔

ترجمان نے شکایت کی کہ مذاکرات میں وزارت مواصلات کے حکام آئے ہی نہیں۔

اب انٹر سٹی بس اونرز کی جانب سے بھی گڈز ٹرانسپورٹرز کی ہڑتال کی حمایت کرتے ہوئے پیر سے اندرون ملک بس سروس معطل رکھنے کا اعلان کر دیا گیا ہے۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM