Can't connect right now! retry

پاکستان
05 اپریل ، 2020

وزیراعلیٰ سندھ کی 14 اپریل کے بعد صنعتیں کھولنے کیلئے ضابطہ کار بنانے کی ہدایت

وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے  محکمہ لیبرز کو 14 اپریل کے بعد صنعتیں مرحلہ وار کھولنے کے لیے ضابطہ کار بنانے کی ہدایت کردی۔

وزیراعلیٰ ہاؤس میں وزیر اعلیٰ سندھ کی زیر صدارت اہم  اجلاس ہوا جس میں کورونا وائرس کی صورتحال اور صنعتیں کھولنے کے حوالے سے تاجروں کی تجویز پر غور کیا گیا۔

اس موقع پر مراد علی شاہ کا کہنا تھا کہ صنعت کاروں نے درخواست کی ہے کہ کچھ شرائط پرصنعتوں کو مرحلہ وار کھولا جائے تاکہ وہ برآمدات کے آرڈرز پورے کرسکیں۔

وزیراعلیٰ نے کہا کہ وہ بھی فیکٹریاں کھولنا چاہتے ہیں، یہ مجبوری نہ ہوتی تو ہم صنعت کا پہیہ کبھی نہ روکتے۔

مراد علی شاہ نے محکمہ لیبر،انڈسٹریز ،ہیلتھ اور قانون نافذ کرنے والے اداروں کو ہدایت کی کہ وہ اس حوالے سے حکمت عملی طے کریں اور ضابطہ کار بنائیں تاکہ  14 اپریل کے بعد کاروباری سرگرمیاں مرحلہ وار شروع کی جاسکیں۔

وزیر اعلیٰ سندھ نے حکام کو  ہدایت کی کہ آئندہ دنوں میں لاک ڈاؤن کے حوالے سے شہریوں کے لیے بھی ایس او پی بنایا جائے۔

اجلاس سے قبل اپنے ایک ویڈیو پیغام میں مراد علی شاہ کا کہنا تھا کہ ابھی تک ہماری کچی آبادیوں اور غریب بستیوں میں یہ مرض نہيں پہنچا، اگر وہاں پھیل گيا تو ہماری صحت کی سہولیات جواب دے جائيں گی اور بہت مشکل ہوگی۔

وزیر اعلیٰ نے شہریوں کو گھروں میں رہنے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ14 اپریل تک لاک ڈاؤن کامیاب رہا تو ہم اس وبا کو کم کرنے میں کامیاب ہوجائيں گے۔

خیال رہے کہ سندھ میں کوروناوائرس  سے اموات کی کل تعداد 15 ہوگئی ہے جبکہ صوبے بھر میں کورونا کے کیسز کی مجموعی تعداد 881 ہوچکی ہے۔

وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے کے لیے صوبے بھر میں 14 اپریل تک ڈاؤن کیا گیا ہے جس کے باعث کاروباری سرگرمیاں منجمد ہوکر رہ گئی ہیں۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM