Can't connect right now! retry

پاکستان
07 اپریل ، 2020

وزیراعلیٰ سندھ سڑکوں اور دکانوں پر رش پر برہم، لاک ڈاؤن مزید سخت کرنے کا حکم

مجھے ابتدائی 7 روز والا لاک ڈاؤن چاہیے اور بلا ضرورت کسی کو کہیں جانے کی اجازت نہ دی جائے: وزیراعلیٰ سندھ کی قانون نافذ کرنے والے اداروں کو ہدایت— فوٹو:فائل

وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے لاک ڈاؤن کے دوران سڑکوں اور دکانوں پر عوام کے رش پر برہمی کا اظہار کیا ہے۔

وزیراعلیٰ ہاؤس میں مراد علی شاہ کی زیر صدارت کابینہ کے اہم ارکان کا مشاورتی اجلاس ہوا جس میں کورونا وائرس کی صورتحال کا جائزہ لیا گیا۔

وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے سڑکوں اور دکانوں پرعوام کے رش پربرہمی کا اظہار کیا اور ہدایت کی کہ قانون نافذ کرنے والے ادارے لاک ڈاؤن پرمکمل عملدرآمد کرائیں۔

وزیراعلیٰ نے پولیس اور رینجرز کی کارکردگی کو سراہا جبکہ لاک ڈاؤن مزید سخت کرنے کا حکم دیا۔

اس دوران وزیراعلیٰ نے ہدایت کی کہ مجھے ابتدائی 7 روز والا لاک ڈاؤن چاہیے اور بلا ضرورت کسی کو کہیں جانے کی اجازت نہ دی جائے۔

انہوں نے کہا کہ کورونا وائرس کے اعداوشمار تشویشناک ہیں لہٰذا عوام سے اپیل کرتا ہوں کہ گھروں پررہیں۔

مراد علی شاہ کا کہنا تھاکہ لاک ڈاؤن کی خلاف ورزی پر 3 فیکٹریوں کو سیل کیا گیا اور ان کے مالکان سے تحریری ضمانت لی گئی ہے۔

خیال رہے کہ کورونا وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے کے لیے سندھ سمیت ملک بھر میں لاک ڈاؤن جاری ہے جبکہ کراچی سمیت سندھ بھر میں دفعہ 144 نافذ ہے جس کے تحت 4 یا اس سے زائد افراد کے جمع ہونے پر پابندی ہے۔

صوبے میں اب تک مہلک وائرس سے 18 اموات ہوچکی ہیں اور تقریباً ایک ہزار افراد متاثر ہیں جبکہ متعدد بار وزیراعلیٰ سندھ نے عوام سے گھروں میں رہنے کی اپیل کی ہے۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM