Can't connect right now! retry

کاروبار
07 اکتوبر ، 2020

آٹےکی قیمت عام آدمی کی قوت خرید سے باہر ہونے لگی

سندھ کے دوسرے بڑے شہر حیدرآباد میں آٹے کی قیمتوں کو پر لگ گئے ہیں  اور عام آدمی کے لیے 2 وقت کی روٹی کا حصول میں مشکل ہوگیا ہے۔

حیدرآباد میں ایک مہینے کے دوران فی کلو آٹے کی قیمت میں 10روپے اضافہ ہوا ہے اور 20کلو آٹے کا تھیلا 1200روپے سے بڑھ کر 1360 روپےکا ہوگیا ہے۔

حیدرآباد میں 70 فیصد کھپت چکی کے آٹے کی ہے، اور آٹا چکیوں پر 10کلو آٹے کے تھیلےکی قیمت 670 سے 680 روپے تک ہے۔

چکی مالکان کہتے ہیں کہ سرکاری گندم دستیاب نہیں اور اوپن مارکیٹ میں گندم کی بوری کی قیمت ساڑھے 5 ہزار روپے تک ہوگئی ہے۔

آٹے کی قیمتوں میں حالیہ اضافے  پر شہری حکومت سے سخت نالاں نظر آتے ہیں اور شہریوں کا کہنا ہے کہ اقدامات نہ اٹھائے جانے کی صورت میں آٹا غریب آدمی کی دسترس سے بالکل باہر ہونے کا امکان ہے۔

دوسری جانب وزارت قومی غذائی تحفظ و تحقیق خوراک کا کہنا ہےکہ سندھ میں 20 کلو تھیلے آٹے کی اوسط قیمت 13 سو روپے سے اوپر ہے،سندھ کے پاس اپنے ذخائر موجود ہیں توپھر آٹا قیمت میں کمی کے لیے ریلیز کرے۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM