سپریم کورٹ: راؤ انوار کا نام ای سی ایل سے نکالنے کی نظرثانی درخواست خارج

دالت کےکہنے پرتاحکم ثانی نام ای سی ایل میں ڈالا گیا ہے: سپریم کورٹ/ فائل فوٹو
دالت کےکہنے پرتاحکم ثانی نام ای سی ایل میں ڈالا گیا ہے: سپریم کورٹ/ فائل فوٹو

اسلام آباد: سپریم کورٹ نے سابق ایس ایس پی راؤ انوار کا نام ای سی ایل سے نکالنے کے لیے نظر ثانی درخواست بھی خارج کردی۔

سپریم کورٹ میں جسٹس اعجازالاحسن کی سربراہی میں 2 رکنی بینچ نے راؤ انوار کے خلاف 444 ماورائے عدالت قتل کیس کی سماعت کی جس دوران سابق ایس ایس پی کا نام ای سی ایل سے نکالنے کےلیے نظر ثانی درخواست دائر کی گئی جسے عدالت نے خارج کردیا۔

راؤ انوار کے وکیل نے مؤقف اپنایا کہ ان کے مؤکل کا کیس ٹرائل کورٹ میں زیر التوا ہے اور ٹرائل کورٹ نے انہیں ضمانت دے رکھی ہے جب کہ راؤ انوار ہر پیشی پر پیش ہورہے ہیں۔

عدالت نے کہا کہ کوئی ریلیف لینا ہو تو نئی درخواست دائر کریں، ای سی ایل سےنام نکالنےکے لیے متعلقہ فورم سے رجوع کریں، عدالت کےکہنے پرتاحکم ثانی نام ای سی ایل میں ڈالاگیا ہے۔

واضح رہے کہ کراچی پولیس کے سابق ایس ایس پی راؤ انوار نقیب اللہ قتل کیس میں نامزد ہیں اور ان کے خلاف ماورائے عدالت قتل کیس بھی زیر سماعت ہے۔

مزید خبریں :