ہنگری میں ورلڈ چیمپئن شپ میں شریک پاکستانی سوئمر لاپتہ

فوٹو:ہنگری پولیس ویب سائٹ
فوٹو:ہنگری پولیس ویب سائٹ

ہنگری کی پولیس نے دا رالحکومت بڈاپسٹ میں عالمی سوئمنگ چیمپئن شپ میں شرکت کیلئے آنے والے پاکستانی سوئمر فیضان اکبر کے لاپتہ ہونے کی تصدیق کرتے ہوئے ان کی تفصیلات ویب سائٹ پر جاری کردی ہیں۔

22 سالہ فیضان اکبر کا تعلق راولپنڈی سے ہے اور وہ سیلف فنانس کے بنیاد پر ورلڈ چیمپئن شپ میں شریک چار رکنی پاکستانی ٹیم کا حصہ تھے۔

ہنگری پولیس کی ویب سائٹ پر جاری تفصیلات کے مطابق فیضان اکبر 18 جولائی سے لاپتہ ہیں۔انہیں 19 جون کو 100 میٹر بیک اسٹروک مقابلوں میں شرکت کرنا تھی مگر عالمی سوئمنگ کی ویب سائٹ پر ان کے نام کے آگے 'ڈڈ ناٹ اسٹارٹ' درج ہے جس سے ظاہر ہوتا ہے کہ وہ مقابلوں سے پہلے ہی غائب ہوگئے تھے ۔

ہنگری پولیس کی ویب سائٹ پر فیضان اکبر کا نام لاپتہ افراد کی فہرست میں درج ہے۔

سوئمنگ ٹیم کے ذرائع اس بات کا خدشہ ظاہر کررہے ہیں کہ فیضان اپنے ایک رشتے دار کے پاس فرانس چلے گئے ہوں تاہم باضابطہ طور پر اس بات کی تصدیق نہیں ہوسکی ہے۔

اس سلسلے میں پاکستان سوئمنگ فیڈریشن کے حکام اور ٹیم مینیجر سے گزشتہ دو روز کے دوران متعدد رابطے کیے گئے تاہم کسی فون کال یا میسج کا جواب نہیں دیا گیا۔ 

ذرائع کا کہنا ہے کہ معاملے سے پاکستان میں حکام کو بھی آگاہ کردیا گیا ہے ۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM