ایلون مسک نے عدالت میں ٹوئٹر پر کیا الزام لگایا؟

ٹوئٹر کی جانب سے معاہدے سے قبل دی گئی غلط معلومات کے ذریعے سوشل میڈیا پلیٹ فارم کے بزنس کے حوالے سے گمراہ کیا گیا: ایلون مسک — فوٹو: فائل
ٹوئٹر کی جانب سے معاہدے سے قبل دی گئی غلط معلومات کے ذریعے سوشل میڈیا پلیٹ فارم کے بزنس کے حوالے سے گمراہ کیا گیا: ایلون مسک — فوٹو: فائل

ٹوئٹر کی جانب سے ایلون مسک کے خلاف داخل کی گئی درخواست کے حوالے سے ٹیسلا کے مالک ایلون مسک نے اپنا جواب عدالت میں داخل کروادیا ہے۔

ایلون مسک نے عدالت میں ٹوئٹر پر فراڈ کا الزام عائد کر تے ہوئے  عدالت میں مؤقف اختیار کیا کہ ٹوئٹر کی جانب سے معاہدے سے قبل  انہیں دی گئی غلط معلومات کے ذریعے  سوشل میڈیا پلیٹ فارم کے بزنس کے حوالے سے گمراہ کیا گیا۔

عدالت میں داخل کیے گئے اپنے جواب میں ایلون مسک نے مؤقف اختیار کیا کہ ٹوئٹر پر اصل صارفین کے حوالے سے انہیں جو اعداد شمار دیے گئے تھے، اصل صارفین کی تعداد اس سے کہیں زیادہ کم ہے۔

انہوں نے مؤقف اختیار کیا کہ  اب اپنے فراڈ کا پردہ فاش ہونے کے خوف میں ٹوئٹر ان پر درست معلومات تک رسائی کے راستے بند کر رہا ہے۔

خیال رہے کہ ایلون مسک سے قبل ٹوئٹر نے عدالت میں پیش کیا گیا اپنا موقف عوام کے سامنے رکھ دیا تھا جس کے جواب میں ایلون مسک کی جانب سے بھی عدالت میں داخل کیا گیا اپنا جواب عوام کے سامنے پیش کیا گیا ہے۔

ٹوئٹر نے مؤقف اختیار کیا تھا کہ ایلون مسک 44 ارب ڈالرز کے معاہدے سے بچنے کے لیے فرضی جواز بنارہے ہیں،  ایلون مسک کی کہانی تصوراتی اور معاہدے سے بچنے کی کوشش ہے کیونکہ حصص میں کمی کے باعث وہ اس معاہدے کو پرکشش تصور نہیں کرتے جبکہ خود ان کی اپنی ذاتی دولت میں کمی آئی ہے۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM