Election 2024 Election 2024

پاکستان
Time 08 دسمبر ، 2023

عائشہ منزل پر عمارت میں آتشزدگی، آگ لگنے کی وجوہات کا تعین نہ ہوسکا

فوٹو: اسکریب گریب
فوٹو: اسکریب گریب

محکمہ فائربریگیڈ کی کراچی میں ایف بی ایریا میں عائشہ منزل پر عمارت میں آتشزدگی کی ابتدائی رپورٹ سامنے آگئی۔

رپورٹ میں انکشاف کیا گیا ہے کہ عمارت میں ایمرجنسی الارم تھا نہ ہنگامی اخراج کے راستے بنائے گئے تھے۔گراؤنڈ فلور پر موجود تمام دکانیں جل کر خاکستر ہوگئی ہیں۔

کراچی میں بدھ کے روز عائشہ منزل پر عمارت میں آگ لگنے کے حوالے سے محکمہ فائربریگیڈ کی ابتدائی رپورٹ سامنے آگئی۔ 

ابتدائی رپورٹ میں فی الحال آگ لگنے کی وجوہات کا تعین نہیں کیا گیا۔

فائربریگیڈ کی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ آگ لگنے کی اطلاع 5 بج کر 41 منٹ پر ملی اور آگ بجھانے کے لیے ٹیم 5 بج کر 42 منٹ پر روانہ ہوئی۔

رپورٹ میں بتایا گیا ہے آگ سےگراؤنڈ فلور پر قائم 169 دکانیں مکمل جل گئیں، تیسری منزل پرایک اپارٹمنٹ مکمل آگ سے متاثر ہوا جبکہ دوسری منزل کے دو اپارٹمنٹس کو معمولی نقصان پہنچا۔

فائربریگیڈ کی رپورٹ میں کہا گیا ہے عمارت کے سامنے کھڑی 18 موٹر سائیکلیں اور ایک گاڑی جل گئی، آگ سے عمارت کے 76 میں سے 73 اپارٹمنٹس محفوظ رہے۔ 

رپورٹ میں یہ بھی انکشاف کیا گیا ہے کہ عمارت میں ایمرجنسی الارم تھا نہ ہنگامی اخراج کے راستے دیے گئے تھے، ،اخراج کے سائن بھی موجود نہیں تھے۔ فائربریگیڈ کوآگ لگنے کی اطلاع بھی دیرسے دی گئی۔ 

خیال رہے کہ بدھ کو  عائشہ منزل کے قریب عرشی شاپنگ سینٹر پر فرنیچر کی دکانوں میں آگ لگنے سے 5 افراد جاں بحق ہوگئے تھے۔

مزید خبریں :