Can't connect right now! retry

کورونا وائرس: چین میں سام سنگ کا سب سے بڑا اسٹور بھی بند

فوٹو: فائل

معروف ٹیکنالوجی کمپنی سام سنگ نے جان لیوا کورونا وائرس کے تیزی سے پھیلنے کے پیشِ نظر چین میں اپنا سب سے بڑا اسٹور عارضی طور پر بند کرنے کا اعلان کردیا۔

سام سنگ ترجمان کے اعلامیے کے مطابق کمپنی نے چین کے شہر شنگھائی میں اپنا فلیگ شپ اسٹور عارضی طور پر بند کردیا ہے۔

یہ اسٹور چین میں سام سنگ کا سب سے بڑا اسٹور تصور کیا جاتا ہے جو گزشتہ سال اکتوبر میں کھلا تھا جہاں متعدد الیکٹرانک پروڈکٹس، اسمارٹ فونز اور ٹیبلٹس فروخت کیے جاتے تھے۔

کمپنی ترجمان کا کہنا ہے کہ ’ہم نے اپنا اسٹور تحفظ کی وجہ سے عارضی طور پر بند کرنے کا فیصلہ کیا ہے‘۔

چینی میڈیا کہ مطابق چین میں سام سنگ کے اسٹور کا دوبارہ کھلنا یہاں کے حالات پر ہی منحصر کرتا ہے۔

واضح رہے کہ اس سے قبل مقبول ٹیکنالوجی کمپنی ایپل چین کے مین لینڈ میں اپنے تمام تر کارپوریٹ آفس، اسٹورز، اور کانٹیکٹ سینٹرز کو 9 فروری سے بند کرنےکا علان کیا تھا جب کہ  سرچ انجن کمپنی گوگل نے بھی بیجنگ میں موجود اپنا دفتر عارضی طور پر بند کر دیا تھا۔

چین کو معاشی نقصان

پُراسرار کورونا وائرس نے جہاں چین میں موجود لوگوں کی زندگیوں کو بُری طرح متاثر کیا ہے وہیں چین کو معاشی طور پر بھی بے حد نقصان پہنچایا ہے۔

چین میں دنیا کی سب سے بڑی انٹرنیٹ مارکیٹ ہے جب کہ چین دنیا کا سب سے بڑا صنعتی مرکز ہے، پُراسرار وائرس کی وجہ سے دنیا کے تقریباً تمام تر صنعت کاروں اور دیگر عالمی کمپنیوں نے چین میں موجود اپنے دفاتر عارضی طور پر بند کر دیئے ہیں جس کے باعث معاشی طور پر بھی نقصان ہو رہا ہے۔

واضح رہے کی چین میں پھیلنے والے خطرناک کورونا وائرس سے  400 سے زائد افراد ہلاک ہوچکے ہیں۔

مزید خبریں :

Notification Management


پاکستان
دنیا
کاروبار
کھیل
انٹرٹینمنٹ
صحت و سائنس
دلچسپ و عجیب

ڈیسک ٹاپ نوٹیفکیشن کے لیے سبسکرائب کریں
Powered by IMM